اورکزئی : میاں شاہ انور بزرگوار کھلوانے کیلئے احتجاج

Share on facebook
Share on google
Share on twitter
Share on linkedin

ضلع اورکزئی میں روحانی پیشوا میاں شاہ انور بزرگوار کے مزار کو زائرین اور مرمت کے لئے کھولنے کے لئے مختلف اضلاع کے لوگوں نے احتجاج شروع کیا ہے اور مظاہرین ضلع اور کزئی پہنچ رہے ہیں۔

بادشاہ انور غگ کمیٹی کے ترجمان ماہر حسن کا کہنا ہے کہ روحانی پیشوا میاں شاہ انور کے مزار کو زائرین کے لئے کھولنے کے لئے مختلف اضلاع کے لوگ ضلع اور کزئی میں جمع ہو رہے ہیں اور اورکزئی کے صدر مقام کلایہ سے احتجاجی تحریک کا آغاز کر دیا ہے.

ضلع کرم، اورکزئی ھنگو اور کوھاٹ سے مظاہرین اور کزئی پہچ کر ستر سم میں جمع ہو رہے ہیں۔

احتجاجی مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے سہیل سید میاں، بشارت سید میاں، ملک نور اکبر، کوثر علی، عباس غلام اور دیگر رہنماوں نے کہا کہ بدامنی کے دور میں روحانی پیشوا میاں شاہ انور کے مزار پر زائرین کی آمد و مرمت پر پابندی لگائی گئی تھی اور ساتھ ساتھ ڈبوری مسجد کو بھی بند کیا گیا تھا.

اب فورسز کی کوششوں اور قربانیوں سے امن قائم ہو گیا ہے اور ڈبوری مسجد کو بھی کھول دیا گیا ہے مگر روحانی پیشوا کے مزار پر لگائی گئی پابندی برقرار ہے جو انہیں کسی صورت قبول نہیں۔

اس وجہ سے روحانی پیشوا کے مریدوں اور عقیدت مندوں نے احتجاجی تحریک شروع کی ہے اور مسئلے کے حل تک ان کا احتجاج جاری رہے گا۔