باڑہ بازار کے متاثرہ 27 تاجروں کیلئے پہلی امدادی قسط جاری

Share on facebook
Share on google
Share on twitter
Share on linkedin

سمیڈا نے قبائلی ضلع خیبر کے معروف کاروباری مرکز باڑہ بازار کے بدامنی اور فوجی آپریشنوں سے متاثرہ 27 تاجروں کو پہلی امدادی قسط جاری کردی۔

نمائندہ ٹرائبل پریس کے مطابق دکانداروں کو یہ امداد سامان کی صورت دی گئی ہے۔

ٹرائبل پریس کے ساتھ گفتگو میں انجمن تاجران باڑہ بازار کے صدرسید آیاز نے اس حوالے سے بتایا کہ اس سلسلے میں سمیڈا نے تین ماہ قبل سروے کیا تھا اور آج منتخب 65 دکانداروں میں سے 27 کو ایک تا آٹھ لاکھ روپے سامان کی صورت امداد دی گئی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ مزید درخواستوں ی جانچ پڑتال اور دکانداروں کا سروے بھی جاری ہے اور جلد ان کیلئے بھی امدادی قسط جاری کی جائے گی۔

سید آیاز کے مطابق باڑہ بازار میں بارہ ہزار سے زائد دکانیں ہیں تاہم سمیڈا کے پاس پانچ ہزار سے بھی کم تاجروں نے درخواستیں جمع کی ہیں۔

انہوں نے وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ کم درخواستوں کی وجہ عدم تشہیر اور درخواستوں کیلئے کم وقت (دو ماہ) دینا تھا۔

انجمن تاجران باڑہ کے صدر نے شکایت کی کہ 2012-13 کے دوران سمیڈا کی جانب سے دیگر اضلاع میں ہر متاثرہ تاجر کو 20 تا 25 لاکھ کی امداد دی گئی جبکہ باڑہ کے تاجران کو کم پیسے دیے جارہے ہیں جو ناانصافی ہے۔