‘کورونا وائرس سے صحت یاب دوسری بار متاثر نہیں ہو سکتا’

Share on facebook
Share on google
Share on twitter
Share on linkedin

جنوبی کوریا کے ماہرین نے تحقیق کے بعد دعویٰ کیا ہے کہ کورونا وائرس سے صحت یاب ہونے والا کوئی بھی مریض دوسری بار متاثر نہیں ہو سکتا۔

گزشتہ دنوں جنوبی کوریا، چین، جاپان اور اٹلی میں مہلک وائرس سے صحتیاب ہونے والے مریضوں میں دوبارہ مہلک وائرس کی تشخیص کا شبہ ظاہر کیا گیا تھا۔

تاہم اب جنوبی کوریا کے ماہرین نے دعویٰ کیا ہے کہ کورونا وائرس سے صحت یاب ہونے والا کوئی بھی مریض دوسری بار متاثر نہیں ہو سکتا۔ ماہرین کا کہنا ہے کہ صحت مند افراد میں دوسری بار مہلک وائرس کی تشخیص ٹیسٹنگ کی خرابی کا نتیجہ ہے۔

ماہرین کے مطابق دوبارہ کورونا ٹیسٹ مثبت آنے کی وجہ مریضوں کے جسم میں مہلک وائرس کے غیر مؤثر ٹکڑے ہیں جن کی کچھ دنوں، ہفتوں اور مکمل صحتیابی کے بعد تشخیص ہوتی ہے اور یہ روایتی ٹیسٹ میں پکڑ میں نہیں آتے۔

ان کا کہنا تھا کہ کورونا کی تشخیص کیلئے کیا جانے والا پی سی آر ٹیسٹ مریض کے جسم میں موجود فعال وائرس اور وائرس کے تباہ شدہ ٹکڑوں میں تفریق نہیں کرسکتا۔

خیال رہے کہ جنوبی کوریا میں 200 سے زائد مریضوں میں کورونا کی دوبارہ تشخیص ہوئی تھی جس پر طبی حکام نے تشویش کا اظہار کیا تھا۔ جنوبی کوریا میں کورونا سے 252 افراد جاں بحق ہوچکے ہیں جبکہ متاثرہ افراد کی تعداد 10 ہزار سے زائد ہے۔