ضلع کرم میں انتظامیہ اور فورسز کے تعاون سے امن معاہدہ طے

Share on facebook
Share on google
Share on twitter
Share on linkedin

ضلع کرم کے علاقے بوشہرہ میں فریقین کے مابین فائرنگ کے واقعے کے بعد قبائلی عمائدین، مقامی انتظامیہ اور فورسز کی کوششوں سے تحریری امن معاہدہ طے پا گیا ہے اور دو ماہ تک فریقین کو معاہدے کا پابند کرایا گیا ہے۔

پاراچنار میں میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے ضلع کرم سے رکن قومی اسمبلی ساجد طوری نے بتایا کہ گذشتہ روز اپر کرم کے علاقہ بوشہرہ میں دو فریقین کے مابین اراضی کے تنازعے پر فائرنگ کا تبادلہ ہوا، جس میں تین افراد زخمی ہوئے تھے۔

فائرنگ کے واقعے کے بعد قبائلی عمائدین فورسز اور مقامی انتظامیہ نے فریقین کے مابین فائر بندی کرا دی اور کامیاب مذاکرات کے بعد دو ماہ کیلئے تحریری طور پر عارضی فائر بندی ہوئی ہے۔

اس دوران متنازعہ اراضی کی ملکیت کے حوالے سے چھان بین کی جائے گی، تحریر میں فیصلہ کیا گیا ہے کہ دو ماہ کے دوران کوئی فریق متنازعہ علاقے میں جدید آباد کاری نہیں کرے گا اور خلاف ورزی کرنے والے فریق کو دو کروڑ روپے جرمانہ کیا جائے گا۔