کورونا کے مریض کون سی ادویات استعمال سے صحتیاب ہوئے؟

Share on facebook
Share on google
Share on twitter
Share on linkedin

کورونا وائرس سے متاثرہ مریضوں کے لئے ہائیڈروکسی کلوروئین اور ایزیتھرو مائی سین فائدہ مند ثابت ہونے لگیں۔ پروفیسر اسد اسلم کہتے ہیں، پنجاب کے سرکاری ہسپتالوں میں کورونا کے مریضوں کو دو ادویات کا پانچ دن کا کورس مکمل کرایا گیا، اب تک اٹھارہ مریض صحت یاب ہوچکے۔

پروفیسر اسد اسلم کا کہنا ہے کہ میو ہسپتال کے آٹھ، پی کے ایل آئی کے چار اور پنجاب کے دیگر اضلاع سے پانچ مریض صحت یاب ہوئے۔

تفصیلات کے مطابق اینٹی ملیریا کے لئے استعمال ہونے والی ہائیڈروکسی کلوروئین پہلے روز دو گولیاں صبح اور دو شام دی گئیں، جبکہ باقی چار دن ایک گولی صبح اور ایک شام دی جا رہی ہے۔

کورونا ایڈوائزری گروپ کے کو چیئرپرسن اسد اسلم کا مزید کہنا تھا کہ گلے کی سوزش، بیکٹریا، جلد کے انفیکشن، آنکھ اور کان کے انفیکشن کے لئے استعمال ہونے والی ایزیتھرومائی سین ایک گولی صبح و شام پانچ دن کا کورس مکمل کروایا جاتا ہے، تمام سرکاری ہسپتالوں میں یہ ادویات استعمال کروا کر مریضوں کو صحت یاب کیا جارہا ہے۔

ڈاکٹر اسد کا مزید کہنا تھا نجی معالج بھی یہ دو ادویات کورونا کے مریضوں کے علاج کیلئے استعمال کر سکتے ہیں، یہ دوا اپنے معالج کے مشورہ کے بغیر کھانے سے سائیڈ ایفیکٹ بھی کرسکتی ہے، اس لئے ڈاکٹر کی مشاورت کے بغیر اسے استعمال نہ کیا جائے۔