منظورپشتین کی تمام مقدمات میں ضمانت منظور

Share on facebook
Share on google
Share on twitter
Share on linkedin

پشتون تحفظ موومنٹ (پی ٹی ایم) کے سربراہ منظور احمد پشتین پر عائدبغاوت کے دو مزید مقدمات میں ضمانت منظور ہوگئی ہے۔

تفصیلات کے مطابق ڈیرہ اسماعیل خان کی ایک مقامی عدالت نے  ہفتہ کو منظور پشتین کی دو درخواستوں پر  سماعت کی۔ منظور احمد پشتین کی جانب سے سعید اختر پیش ہوئے۔ عدالت نے دونوں جانب سے دلائل مکمل ہونے کے بعد پی ٹی ایم کے سربراہ کی ضمانت منظور کرتے ہوئے انہیں ایک لاکھ روپے کے مچلکے جمع کرنے کا حکم دیا۔

منظور پشتین کی بغاوت کے چار مقدمات میں سے دو مقدمات میں  ضمانت پہلے ہی منظور ہو چکی ہے ۔

پشتون تحفظ موومنٹ کے سینئر رہنما و رکن قومی اسمبلی محسن داوڑ نے اپنے ٹوئٹر پر منظور پشتین کی ضمانت منظور ہونے کی تصدیق کرتے ہوئے  انسانی حقوق کیلئے کام کرنے والے اداروں کا شکریہ ادا کیا۔

انہوں نے کہا کہ تمام مقدمات میں ان کی ضمانت منظور ہوئی ہے اور پیر  تک رہا ہوجائیں گے۔

واضح رہے کہ  منظور پشتین کو  پشاور کے علاقے  شاہین ٹاؤن سے  27 جنوری کو گرفتار کیا گیا تھا اور انہیں 14 روزہ جوڈیشل ریمانڈ پر پشاور کی سینٹرل جیل بھیجا گیا تھا۔

گرفتاری کے اگلے روز پشاور کی عدالت نے منظور پشتین کی راہداری ضمانت کی درخواست مسترد کرتے ہوئے انہیں ڈیرہ اسمٰعیل خان منتقل کرنے کا حکم دیا تھا، جہاں وہ اس وقت قید ہیں۔