دہشتگردی کیخلاف جنگ بڑی قربانیوں کے بعد جیتی

Share on facebook
Share on google
Share on twitter
Share on linkedin

انسپکٹر جنرل آف پولیس خیبر پختونخوا ڈاکٹر ثناء اللہ عباسی نے کہا ہے کہ پولیس نے دہشتگردوں کیخلاف کامیاب کارروائیاں کی ہیں، ضم شدہ جنوبی وزیرستان میں پولیس نے اب تک 19 مقدمات درج کئے ہیں، اسلحہ و منشیات کے خلاف بھی بڑی کارروائیاں کی گئی ہیں، جس کیلئے پولیس شاباش کی مستحق ہے، پولیسنگ کے نظام میں بہتری اور ویلفیئر کیلئے ہماری کوششیں جاری ہیں.

خیبر پختونخوا حکومت سے مل کر وسائل پیدا کئے جائیں گے، ڈسٹرکٹ پولیس آفس ڈیرہ اور پولیس لائن کو بھی جدید خطوط و طرز پر تعمیر کیا جائیگا۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے ڈیرہ اسماعیل خان کے دورے کے موقع پر ریجنل پولیس آفس ڈیرہ میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

اس موقع ریجنل پولیس آفیسر ڈیرہ فلائیٹ لیفٹیننٹ (ر) سید امتیاز شاہ، ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر ڈیرہ کیپٹن (ر) حافظ واحد محمود، ڈی پی او ٹانک و جنوبی وزیرستان، ایس پی ایف آر پی سردار توحید خان گنڈہ پور، ایس پی سی ٹی ڈی شبیر خان مروت اور ایس پی انوسٹی گیشن امان اللہ خان بھی موجود تھے۔

انسپکٹر جنرل آف پولیس خیبر پختونخواہ ڈاکٹر ثناء اللہ عباسی نے کہا کہ مسلح افواج کا شکریہ ادا کرتے ہیں کہ جن کی کوششوں اور قربانیوں سے قبائلی اضلاع اور پورے صوبے میں امن قائم ہوا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہم نے دہشتگردی کیخلاف جنگ بڑی قربانیوں کے بعد جیتی ہے۔ دہشتگرد جہنم واصل ہو رہے ہیں، ڈیرہ پولیس نے بھی چند دنوں میں دو دہشتگرد مارے اور ایک کو گرفتار بھی کیا ہے۔

ماضی کی نسبت آج حالات بہتر ہیں، ضم ہونے والے اضلاع میں اصلاحات کا عمل شروع ہو چکا ہے۔ وفاقی اور صوبائی حکومتیں سکیورٹی کے مسائل پر بھرپور توجہ دے رہی ہیں، صوبائی حکومت نے ہمیں وسائل کی کمی دور کرنے کیلئے فنڈز فراہمی کی یقین دہانی کرائی ہے۔

اس موقع پر صحافیوں نے پولیس کے اقدامات کی تعریف کی اور مزید بہتری کیلئے اپنی تجاویز بھی پیش کیں۔

انہوں نے ڈی پی او دفتر میں قائم جدید لیب میں ہیومن ریسورسز منیجمنٹ سسٹم ڈیسک کا افتتاح بھی کیا۔

ڈی پی آفس دورہ کے موقع پر ریجنل پولیس آفیسر ڈیرہ فلائیٹ لیفٹیننٹ (ر) سید امتیاز شاہ اور ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر ڈیرہ کیپٹن (ر) حافظ واحد محمود نے انہیں اس حوالے سے تفصیلی بریفنگ بھی دی۔

پولیس لائن کے دورہ کے موقع پر انسپکٹر جنرل آف پولیس خیبر پختونخواہ ڈاکٹر ثناء اللہ عباسی نے پولیس دربار سے خطاب بھی کیا اور پولیس اہلکاروں کے مسائل سنے اور انکے حل کیلئے موقع پر احکامات بھی جاری کئے۔

پولیس لائن آمد پر شہداء کے بچوں نے آئی جی پی کو پھولوں کے گلدستے پیش کئے، آئی جی پی نے یادگار شہداء پر پھول چڑھائے اور شہداء کیلئے دعا کی۔