باڑہ کا واحد سرکاری ہسپتال الٹراساؤنڈ ٹیکنیشن سے محروم

Share on facebook
Share on google
Share on twitter
Share on linkedin

قباٸلی ضلع خیبر کی تحصیل باڑہ کی پانچ لاکھ تک کی آبادی کے لئے واحد تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال ڈوگرہ میں مرد مریضوں کیلئے کوئی الٹراساؤنڈ ٹیکنیشن نہیں, مرض کی تشخیص کیلئے مرد مریضوں کو نجی یا پشاور کے دیگر ہسپتالوں کو ریفر کیا جاتا ہے۔

مقامی لوگوں کے مطابق تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال ڈوگرہ میں کوئی میل الٹراساونڈ ٹیکنیشن موجود نہیں جبکہ معمولی سی بیماری کی تشخیص کیلئے بھی نارینہ مریضوں کو نجی الٹرا ساونڈ مراکز یا حیات آباد پشاور کے ہسپتالوں کو جانا پڑتا ہے۔

ذرائع کے مطابق ڈوگرہ ہسپتال میں میل الٹراساونڈ ٹیکنیشن کی پوسٹ ہی موجود نہیں ہے۔

مقامی افراد نے وزیر اعلی خیبر پختونخواہ اور محکمہ صحت کے دیگر اعلی حکام سے مطالبہ کیا کہ ڈوگرہ ہسپتال کو جلد از جلد اپ گریڈ کیا جائے، ہمیں برائے نام ہسپتال ہرگز قبول نہیں بصورت دیگر ہسپتال کو تالے لگا دیں گے۔