وزرستان میں جرگہ سسٹم کی بحالی پر تعلیم یافتہ طبقے کا تحفظات کا اظہار

Share on facebook
Share on google
Share on twitter
Share on linkedin

جنوبی وزیرستان وانا میں جرگہ سسٹم کی بحالی پر احمدزئی وزیر سمیت دوتانی،سلیمان خیل قوم نے تحفظات کا اظہار کیا ہے

مزکورہ اقوام کے مطابق فاٹا انضمام کو قبول کرنے کی ایک بڑی وجہ یہ ہے کہ قبائلی عوام جرگہ سسٹم سے تنگ اگئے تھے کیونکہ جرگے کے زیادہ تر فیصلے یک طرفہ ہوتے تھے اور مالی فوائد کے حصول کے لئے جرگہ کرنے والے مالکانان معاملات کوحل کرنے کے بجائے مذید طول دیتے تھے۔

ان کا کہنا تھا کہ جرگہ سسٹم کے ناکام ہونے کی وجہ سے قبائلی اضلاع میں تنازعات شدت اختیار کر گئے ہیں۔

تعلیم یافتہ طبقے نے وزیراعلیٰ خیبرپختون خواہ سے مطالبہ کیا ہے کہ جرگہ سسٹم پر پابندی لگائی جائے اور ضلع جنوبی وزیرستان کی عدالت کو وانا منتقل کیا جائے تاکہ جنوبی وزیرستان کی عوام کو انصاف کے حصول کے لئے 120 کلومیٹردور ضلع ٹانک نا جانا پڑھے۔