ضم اضلاع کی نئی تحصیلوں کا نوٹیفیکیشن پیش نہ کرنے پر الیکشن کمیشن برہم

Share on facebook
Share on google
Share on twitter
Share on linkedin

خیبرپختونخوا حکومت صوبہ میں ضم ہونے والے اضلاع کی نئی تحصیلوں کا نوٹیفکیشن منگل کو پھر الیکشن کمیشن میں پیش نہ کر سکی جس پر الیکشن کمیشن نے برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ آپ تاخیر کر رہے ہیں کتنا عرصہ گزر چکا ہے لیکن آپ نے ابھی تک کام مکمل نہیں کیا۔

منگل کو قائم مقام چیف الیکشن کمشنر الطاف ابراہیم قریشی کی سربراہی میں دو رکنی بنچ نے سماعت کی۔

دوران سماعت ایڈیشنل ایڈووکیٹ جنرل خیبرپختونخوا نے بتایا کہ اگر الیکشن کمیشن توجہ نہ دیتا تو یہ جو کام ہوا ہے وہ بھی نہیں ہونا تھا۔

انہوں نے کہا کہ مالا کنڈ کے 12 اضلاع میں سے 5 اضلاع کی رپورٹ بورڈ آف ریونیو کو بھیج دی ہے۔

ایڈیشنل ایدووکیٹ جنرل نے کہا کہ انفراسٹرکچر کا مسئلہ ہے حکومت کے پاس پیسے نہیں ہیں کہ وہ تنخواہیں دے۔

دوران سماعت خیبرپختونخواہ کے ایڈیشنل ایڈوکیٹ جنرل ملک اختر حسین نے الیکشن کمیشن سے مزید وقت مانگ لیا جس پر قائمقام چیف الیکشن کمشنر نے استفسار کیا کہ کتنا وقت آپ کو اور چاہیے۔

ایڈیشنل ایڈووکیٹ جنرل کے پی کے نے کہا کہ ہمیں 3 ہفتے کا مزید وقت دے دیں، الیکشن کمیشن نے مزید وقت دیتے ہوئے کیس کی سماعت 3 فروری تک ملتوی کر دی۔