سکھ نوجوان رویندر سنگھ کی قاتلہ اپنی منگیترنکلی

Share on facebook
Share on google
Share on twitter
Share on linkedin

شانگلہ سے تعلق رکھنے والے سکھ نوجوان رویندرسنگھ قتل کیس میں اہم پیشرفت سامنے آگئی۔ اعلیٰ سکیورٹی آفیسر کے مطابق رویندرسنگھ کو ان کی منگیترپریم کماری نے قتل کیا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ پریم کماری رویندر سنگھ سے شادی کے لئے راضی نہ تھی جس پر اس نے انتہائی قدم اٹھایا اور ملزمان کو رقم دیکر رویندر سنگھ کا قتل کروا دیا، تحقیقاتی ٹیم کے مطابق ملزمہ نے رویندر سنگھ کے قتل کے لئے ملزمان کو سات لاکھ روپے رقم دینے پر بات فائنل کی۔ ذرائع کے مطابق رویندر سنگھ کی منگیتر پریم کماری کو مردان سے گرفتار کر کے مردان جیل منتقل کر دیا گیا ہے۔

ذرائع کے مطابق رویندر سنگھ کو مردان میں ہی قتل کیا گیا جبکہ کیس کا رخ موڑنے کے لئے لاش کو پشاور منتقل کیا گیا، لاش پھینکنے کے بعد قاتلوں نے مقتول کے اہل خانہ کو فون کیا کہ پیسے بھجوا دو ورنہ تمہارے بھائی کو قتل کر دیں گے۔ یہ سب کچھ صرف کیس کی تفتیش کا رخ موڑنے کے لئے کیا گیا تاکہ اصل قاتلوں کا پتہ نہ چل سکے ، سی سی پی اور پشاور کی نگرانی میں کمیٹی نے دن رات کام کر کے کیس کو ٹریس کیا۔

اعلیٰ سکیورٹی آفیسر کے مطابق سکھ کمیونٹی کے نوجوان رویندر سنگھ کے قتل کے بعد اس کی لاش کو پشاور لایا گیا جبکہ ملزمان نے مقتول رویندر سنگھ ہی کے موبائل سے فون کرکے اہل خانہ کو اطلاع دی کہ رویندر سنگھ کو قتل کر دیا گیا ہے۔