باجوڑ، سلارزئی کالج کی تعمیر میں تاخیری حربوں کیخلاف طلبہ سرتاپا احتجاج

Share on facebook
Share on google
Share on twitter
Share on linkedin

قبائلی ضلع باجوڑ کے علاقے سلارزئی سے تعلق رکھنے والے طلبہ نے سلارزئی کالج کی تعمیر میں تاخیری حربوں کیخلاف باجوڑ پریس کلب کے سامنے احتجاجی مظاہرہ کیا۔ طلبہ نے بینرز اور پلے کارڈ اُٹھارکھے تھے جن پر کالج کے قیام میں تاخیر کیخلاف نعرے درج تھے ۔

طلبہ کا کہنا تھا کہ برنگ اور سلارزئی کالجوں کی منظوری 2014 میں دی گئی تھی جن میں برنگ کالج کی تعمیر مکمل ہوئی ہے لیکن سلارزئی کالج 5 سال گزرنے کے باوجود بھی تعمیراتی کام شروع نہ ہوسکا اور نہ ہی کالج کیلئے اراضی خریدی گئی۔

سلارزئی تحصیل ضلع باجوڑ کا آبادی کے لحاظ سے دوسری بڑی تحصیل ہے لیکن یہاں پر طلبہ میٹرک تک تعلیم حاصل کرنے کے بعد تعلیم یا تو ادھوری چھوڑ دیتے ہیں اور یا خار کالج جانے پر مجبور ہو جاتے ہیں جوکہ بہت دور ہے۔

طلبہ کا کہنا تھا کہ کالج کے تعمیر میں تاخیر صرف حکومت کی وجہ سے ہو رہی ہے اور اس کے لئے جن لوگوں نے مفت زمین دینے کا اعلان کیا تھا وہ اب محکمہ تعلیم کے دفتر میں ڈیوٹی سرانجام دے رہے ہیں لہٰذا وہ لوگ جنہوں نے مفت زمین دینے کا اعلان کیا تھا اب آگے آجائیں۔

طلبہ نے کہا کہ اگر سلارزئی کالج منصوبے پر جلد از جلد کام شروع نہ کیا گیا تو ہم احتجاجی تحریک پر مجبور ہوں گے۔