باجوڑ کے عوام کے لیے پبلک لائبریری کھولنے کا اعلان

Share on facebook
Share on google
Share on twitter
Share on linkedin

باجوڑ میں 2008ء سے بند پبلک لائبریری کو عوام کے لیے ہفتے کو کھول دیاجائے گا۔ سب ڈویژن خار کے اسسٹنٹ کمشنر انوار الحق نے ٹی این این کے ساتھ بات چیت کے دوران بتایا کہ باجوڑ کے عوام کا دیرینہ مطالبہ تھا کہ ان کے لیے یہ لائبریری کھول دی جائے۔

انہوں نے کہا کہ عوام کے مطالبے پر انہوں نے لائبریری کے کئی وزٹ کئے لیکن یہاں سٹاف کی کمی کے باعث یہ لائبریری بند تھی۔ اسسٹنٹ کمشنر نے بتایا کہ سٹاف کی کمی کے ساتھ ساتھ لائبریری فعال نہ ہونے کی اور بھی وجوہات تھی تاہم اب ڈی سی اور ضلعی انتظامیہ کی مدد سے وہ اس لائبریری کو عوام کے لیے کھول رہے ہیں۔

انہوں نے یہ بھی بتایا کہ ضلعی انتظامیہ نے اپنی مدد آپ کے تحت اس کے لیے دو بندوں کو تعینات کردیا ہے جو لائبریری کو سنبھالیں گے جس میں عبد الواجد بھی شامل ہے جو یہاں کے انچارج ہونگے۔ انہوں نے کہا کہ عبد الواجد نے ایم اے ہسٹری کیا ہے جنہوں نے کہا ہے کہ وہ رضاکارانہ طور پر یہ لائبریری چلائیں گے جوکہ بہت خوش آئند بات ہے۔

انہوں نے کہا ہفتے کے روز اس کا باقاعدہ افتتاح کریں گے۔ ایک سوال کے جواب میں اسسٹنٹ کمشنر نے کہا کہ یہاں کتابوں کی کمی ہے تاہم ایم پی اے انور زیب خان اور باقی لوگوں نے بھی یقین دہانی کروائی ہے کہ وہ اس لائبریری کو کتابیں مہیا کریں گے۔ انہوں نے کہا یہاں نیوز پیپر بھی روزانہ کی بنیاد پر آئیں گے اور مثبت سرگرمیوں کو فروغ ملے گا۔

یاد رہے کہ یہ لائبریری 8 اگست سال 2008 کو باجوڑ ایجنسی میں دہشت گردوں کے خلاف آپریشن شروع ہونے کے بعد بند کردی گئی تھی۔ یہ لائبریری باجوڑ سکاؤٹس ہیڈ کوارٹرز کے قریب واقع ہے۔

مقامی لوگوں کے مطابق لائبریری بند ہونے کے باعث مطالعہ کرنے والوں کی تعداد میں روز بہ روز کمی آرہی تھی کیونکہ طلباء اور کتاب کے شوقین باقی افراد بازار سے کتابیں خریدنے کی استطاعت نہیں رکھتے اور لائبریری بند پڑی تھی۔