نگران وزیراعظم سے ایرانی صدر کی ملاقات، باہمی دلچسپی کے امور پر تبادلہ خیال

نگران وزیراعظم انوالحق کاکڑ سے ایرانی صدر ابراہیم رئیسی نے ملاقات کی، ملاقات میں دو طرفہ تعلقات اور باہمی دلچسپی کے امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

نگران وزیراعظم انوارالحق کاکڑ اور ایرانی صدر ابراہیم ریئسی کی ملاقات اقوام متحدہ جنرل اسمبلی کے اجلاس کے موقع پرہوئی، ملاقات میں نگران وزیر خارجہ جلیل عباس جیلانی، اقوام متحدہ میں مستقل مندوب منیر اکرم اور اعلیٰ حکام بھی شریک ہوئے۔

انوارالحق کاکڑ نے کہا کہ پاکستان ایران کے ساتھ اپنے قریبی برادرانہ تعلقات کو مزید وسعت دینا چاہتا ہے، ایران کے ساتھ اقتصادی تعاون کا بھی فروغ چاہتے ہیں۔

نگران وزیراعظم کی جانب سے معاشی میدان میں دو طرفہ تعاون بڑھانے پر خصوصی زور دیا گیا، انوارالحق کاکڑ نے کہا مند بارڈر مارکیٹ جیسے اقدامات سرحدی علاقوں کی ترقی میں اہم ثابت ہوں گے۔ ایسے اقدامات دونوں ممالک کے عوام کی بہتری کے لئے مشترکہ عزم کو تقویت دیں گے۔

انوارالحق کاکڑ نے کہا ایرانی صدر کی  سب سے پہلے پڑوس  کی پالیسی پاکستان کی علاقائی ترقی اور اشتراک کی حکمت عملی سے مطابقت رکھتی ہے۔ نگران وزیراعظم نے علاقائی تجارت بڑھانے پر زور دیا۔