جنوبی وزیرستان : عالمی ہفتہ بریسٹ فیڈنگ آگاہی مہم کے سلسلے میں سیمینارکا انعقاد

جنوبی وزیرستان لوئر وانا میں عالمی ہفتہ بریسٹ فیڈنگ آگاہی مہم کے سلسلے میں محکمہ صحت اور یونیسیف کے تعاون سے سیمینارکا انعقاد کیاگیا.

اجلاس میں سینئیر ڈاکٹر زین العابدین،ایم ایس سپین ہسپتال ڈاکٹر صادق،نیشنل پروگرام کوآرڈینیٹر ڈاکٹر حمیداللہ،نیوٹریشن کوآرڈینیٹر وارث خان،علاقائی چئیرمینوں،علماء،میڈیا،ہیلتھ اسٹاف کے علاؤہ دیگر افراد نے شرکت کیں،

سیمینار سے سینئیر ڈاکٹر زین العابدین ،ڈاکٹر صادق اور مولانا نیک محمد نے خطاب کرتے ہوئے کہا،کہ بچے کیلئے ماں کے دودھ کی اتنی افادیت ہے،کہ ہمارے مذہب نے بچے کو دو سال تک دودھ پلانے کا حکم دیا ہے،جو مائیں اپنے بچوں کو دودھ پلاتی ہیں،وہ کئی قسم کی بیماریوں سے محفوظ رہتی ہیں،

ان خیالات کا اظہار سینئر ڈاکٹر زین العابدین نے سیمینار سے خطاب کے دوران کیا،ڈاکٹر نے کہا،کہ بچے کیلئے اپنی ماں کی دودھ تمام تر غذاء سے بھرپور ہیں،جس میں قدرتی طور پر کسی چیز کی کمی نہیں ہوتی،

مولانا نیک محمد نے کہا کہ اسلام میں ماں کو دو سال تک بچے کو دودھ پلانے کا حکم ہے،اور ساتھ میں یہ کہا،کہ جو ماں اپنے بچے کو دودھ پلاتی ہیں،اس کو ہر قطرے کے بدلے 25 نیکیوں کا اجر ملتا ہے،جس بچے کو اپنی ماں کا دودھ پلایا جاتا ہے،وہ دوسرے بچوں کی نسبت ذہین اور کمال صلاحیتوں کا حامل ہوتا ہے،

ایم ایس سپین ہسپتال ڈاکٹر صادق نے کہا،کہ بریسٹ فیڈنگ کے حوالے سے اگست میں عالمی ہفتہ آگاہی منایا جاتا ہے.

انہوں نے کہا ہے کہ ہم آج اس مقصد کیلئے یہاں جمع ہوگئے ہیں،تاکہ ہم ایک دوسرے کو بریسٹ فیڈنگ کے حوالے سے ایک دوسرے کو آگاہ کریں،انہوں کہا،کہ مان کو چاہئے کہ اپنے بچے کو 6 مہینے تک صرف اور صرف اپنا دودھ پلایا جائے،

انہوں نے مزید کہا کہ گائے اور دیگر جانوروں کے دودھ میں صرف پروٹین پایا جاتا پے،جبکہ تحقیق سے یہ بات سامنے آگئی ہے،کہ ماں کی دودھ میں مکمل وٹامنز اور سب کچھ موجود ہیں،

سیمینار کے آخر میں واک کا اہتمام کیا گیا تھا۔جس میں ماں کی دودھ کی افادیت اور آگاہی کے بینرز بھی اٹھا رکھے تھے۔