داسو دہشت گرد حملے کا ماسٹرمائنڈ افغانستان میں مارا گیا

داسو دہشت گرد حملے کا ماسٹر مائنڈ طارق افغانستان میں مارا گیا، حملے میں چینی انجینئروں سمیت تیرہ افراد ہلاک ہوگئے تھے۔

تفصیلات کے مطابق داسو دہشتگرد حملے کا ماسٹرمائنڈ اور کالعدم تحریک طالبان پاکستان کا بدنام زمانہ سرغنہ طارق ہلاک ہوگیا۔

بدنام زمانہ سرغنہ افغانستان کے علاقے کنڑ میں ہلاک ہوا، ٹی ٹی پی لیڈر سیکیورٹی فورسز پر حملوں سمیت بے گناہ شہریوں کے قتل اور مختلف دہشت گردی کی وارداتوں میں بھی مطلوب تھا۔

داسو پراجیکٹ کے قریب چینی انجینیئروں کی بس پر حملہ کیا گیا تھا، حملے میں چینی انجینیئروں 13 افراد ہلاک اور متعدد زخمی ہوگئے تھے۔

چینی انجینئر اور عملہ دو بسوں میں معمول کے مطابق صبح کی شفٹ میں داسو ہائڈرو پاور پراجیکٹ پر اپنے کام پر جا رہے تھے۔

دفاعی تجزیہ کار بریگیڈیئر ریٹائرڈ وقارحسن نے کالعدم تحریک طالبان پاکستان کے بدنام زمانہ سرغنہ طارق کی ہلاکت پر  گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ داسو دہشت گرد حملے کے ماسٹر مائنڈ طارق کی ہلاکت بہت بڑی کامیابی اور پاکستان کے لیے اچھی خبرہے اور یہ پاکستانی ایجنسیوں اور کابل کی مشترکہ تعاون کا نتیجہ ہے۔