ہمیں لگ رہا ہے خیبرپختونخوا حکومت دیوالیہ ہو جائے گی۔ سپریم کورٹ

Share on facebook
Share on google
Share on twitter
Share on linkedin

سپریم کورٹ نے خیبرپختونخوا حکومت زراعت کے ملازم احمد سعید کی طرف سے تنخواہ کی ادائیگی سے متعلق کیس کی سماعت کے دوران ریمارکس دیتے ہوئے کہا ہے کہ ملازمین جب کام نہیں کرتے تو تنخواہ کیوں مانگتے ہیں, ہمیں لگ رہا ہے خیبرپختونخوا حکومت دیوالیہ ہوجائے گی۔ معلوم نہیں پشاور ہائی کورٹ کیا کر رہا ہے ؟ ہمیں ان کے احکامات کی بھی سمجھ نہیں آ رہی۔

کیس کی سماعت جسٹس گلزار احمد کی سربراہی میں 2 رکنی بنچ نے کی۔

دوران سماعت جسٹس گلزار احمد نے سوال اٹھایا کہ کیا جس وقت کی تنخواہ کا تقاضا کیا جا رہا ہے اس وقت آپ نے کام بھی کیا ہے یا نہیں جس پر محکمہ زراعت کے ملازم احمد سعید کے وکیل نے موقف اپنایا کہ میرے موکل نے کچھ عرصہ کام کیا اور کچھ عرصہ کام نہیں کیا, ہائی کورٹ نے واضح احکامات دیے ہیں۔

احمد سعید نے کہا کہ کے پی کے حکومت کے حالات سنگین ہو چکے ہیں، موجودہ حالات میں خیبرپختونخوا حکومت کے دیوالیہ ہونے کی نوبت بن چکی ہے۔

عدالت نے احمد سعید کی تنخواہ کی ادائیگی سے متعلق درخواست خارج کرتے ہوئے معاملہ نمٹا دیا ہے۔