ریاست نہیں گورننس ناکام ہوئی : ملیحہ لودھی

سابق سفیر و سابق مستقل مندوب اقوام متحدہ ڈاکٹر ملیحہ لودھی نے کہا ہے کہ ریاست ناکام نہیں ہوئی، گورننس ناکام ہوئی ہے، لڑائی جھگڑے اتنی شدت اختیار کر گئے ہیں کہ سیز فائر کی ضرورت ہے۔

ڈاکٹر ملیحہ لودھی کا کہنا تھا کہ سیاسی اختلافات کا حل سیاسی ہی ہونا چاہیئے، سیاسی پارٹیوں کو بار بار عدالت نہیں جانا چاہیئے، فوج کو سیاست میں مداخلت کا کہتے بھی ہیں اور پھر تنقید بھی کرتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ملک کو اس وقت ایک نہیں بے شمار چیلنجز کا سامنا ہے، میں نے اپنی زندگی میں ایسی صورتحال کبھی نہیں دیکھی، اس وقت سیاسی پارٹیوں کے درمیان سیز فائر کی ضرورت ہے۔

ڈاکٹر ملیحہ لودھی نے کہا کہ اس وقت پاکستان کو 11 ارب ڈالرز کی ضرورت ہے، پاکستان اس وقت کسی لڑائی کا متحمل نہیں ہوسکتا۔

سابق سفیر و سابق مستقل مندوب اقوام متحدہ کا کہنا تھا کہ الیکشن کے حوالے سے اتفاق رائے کیساتھ معاہدہ ہونا چاہیئے، ملک کو ریفارمز کی ضرورت ہے۔