لکی مروت اور بنوں میں فورسز اور دہشتگردوں میں فائرنگ، اہلکار شہید، 4 دہشتگرد ہلاک

ضلع بنوں کے علاقے جانی خیل میں سیکیورٹی فورسز اور دہشت گردوں کے درمیان فائرنگ سے اہلکار شہید جبکہ 4 دہشت گرد ہلاک ہوگئے۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق شدید فائرنگ کے تبادلے میں 4 دہشت گرد مارے گئے اور ہلاک دہشت گردوں سے اسلحہ اور گولہ بارود بھی برآمد ہوا ہے۔

آئی ایس پی آر نے بتایا کہ دہشت گردوں کی فائرنگ سے 25 سالہ سپاہی محمد وسیم بہادری سے مقابلہ کرتے ہوئے شہید ہوگیا۔

آئی ایس پی آرکے مطابق مارے گئے دہشت گرد معصوم شہریوں کے قتل اور سیکیورٹی فورسز کے خلاف دہشت گردی کی کارروائیوں میں ملوث تھے، علاقے میں موجود دہشت گردوں کو ختم کرنے کے لیے علاقے کا کلیرنس آپریشن جاری ہے۔

دسرے جانب لکی مروت میں دہشت گردوں کا پولیس چوکی پر حملہ، خیبر پختونخوا پولیس کا اہلکار شہید ہوگیا۔

تفصیلات کے مطابق لکی مروت میں رات گئے دہشت گردوں نے خود کار ہتھیاروں سے پولیس چوکی شہباز خیل پر حملہ کر دیا، جسے بہادر جوانوں نے پسپا کر دیا۔

پولیس حکام کے مطابق حملے کے دوران گولیاں لگنے سے خیبر پختونخوا پولیس کا کانسٹیبل تحسین اللہ شہید ہوگیا۔ ڈی پی او نے بتایا ہے کہ دہشت گرد بھاری ہتھیاروں سے حملے کے بعد فرار ہوگئے، جن کی گرفتاری کے لیے علاقے میں سرچ آپریشن جاری ہے۔

شہید اہلکار کی لاش پوسٹ مارٹم اور ضروری کارروائی کے لیے مقامی اسپتال منتقل کر دی گئی ہے۔