کالعدم ٹی ٹی پی پاکستان کیلئے ریڈ لائن ہے، بلاول بھٹو زرداری

وفاقی وزیر خارجہ بلاول بھٹو زرداری کا کہنا ہے کہ کالعدم ٹی ٹی پی پاکستان کے لیے ریڈ لائن ہے، اگر ثابت ہوا کہ افغان طالبان ٹی ٹی پی کو روک نہیں رہے تو ہمارے تعلقات ان سے ٹھیک نہیں رہیں گے۔

واشنگٹن میں پاکستانی سفارت خانے میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ اگر افغان طالبان کو شدت پسندوں کے خلاف آپریشن میں مدد کی ضرورت ہو تو فراہم کریں گے۔

انہوں نے کہا کہ انسداد دہشت گردی کے لیے امریکا کے ساتھ تعاون پر کوئی نیا معاہدہ نہیں ہوا۔

بلاول بھٹو کا مزید کہنا ہے کہ امریکا میں سفارت خانے کی زیر ملکیت عمارت فروخت ہونا ضروری ہے۔ ان کا یہ بھی کہنا ہے کہ انتخابات وقت پر ہی ہوں گے، عمران خان اس لیے قبل از وقت انتخابات چاہتے ہیں، تاکہ دھاندلی میں مدد مل سکے۔

دسرے جانب وزیر خارجہ بلاول بھٹو زرداری نے افغانستان میں لڑکیوں کی اعلیٰ تعلیم پر پابندی لگائے جانے پر مایوسی کا اظہار کیا ہے۔

اماراتی ہم منصب سے گفتگو کرتے ہوئے بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ اسلام پہلا مذہب ہے، جس نے خواتین کو حقوق دیئے اور سب کے لیے تعلیم کی اہمیت اجاگر کی۔

انہوں نے کہا کہ امارتی ہم منصب سے موسمیاتی تبدیلی اور کوپ 28 لیڈر شپ سے متعلق بھی بات چیت ہوئی۔