ضم شدہ اضلاع کے آٹھ ہزار گھرانوں میں ربیع فصلوں کے بیج تقسیم

Share on facebook
Share on google
Share on twitter
Share on linkedin

خیبرپختونخوا میں ضم شدہ اضلاع کے آٹھ ہزار گھرانوں میں ربیع فصلوں کے بیج تقسیم کیے گئے ہیں۔

پشاور میں منعقدہ تقریب میں اقوام متحدہ کے ذیلی ادارے برائے زراعت و خوراک (ایف اے او) نے آٹھ ہزار گھرانوں میں، جن میں 410 ایسے گھرانے بھی تھے جن یں ہر گھرانے کی سربراہ کوئی خاتون ہے، 50 کلو گندم کے، 25 کلو مٹر کے اور 25 کلو رھوڈس گھاس کے بیج ہر خاندان یا گھرانے کو دیے گئے۔

خیبرپختونخوا مرجڈ ڈسٹرکٹس پروگرام نامی اس پراجیکٹ کو ڈی ایف آئی ڈی کا تعاون حاصل ہے جبکہ اسی پراجیکٹ کے تحت جاپان انٹرنیشنل کوآپریشن ایجنسی (جے آئی سی اے) کے تعاون سے یہی پیکجز مزید ایک ہزار گھرانوں میں بھی تقسیم کیے گئے۔

پراجیکٹ کا مقصد فصلوں کی پیداوار اور فوڈ سیکورٹی کی بحالی ہے جس سے مذکورہ گھرانے کاشت کیلئے معیاری بیج کی پیداوار میں خود کفیل ہو جائیں گے۔

اس موقع پر انہیں فصلوں کی دیکھ بھال، کٹائی کے بعد فصلوں کا کیا کرنا ہے اور بیماریوں پر قابو کیسے پانا ہے اس حوالے سے بھی آگاہی دی گئی۔

اس موقع پر پاکستان مین ایف اے او کے نمائندے فرخ توئیروف کا کہنا تھا کہ ڈی ایف آئی ڈی اور جے آئی سی اے کے تعاون سے کرم، اورکزئی اور شمالی و جنوبی وزیرستان میں اس پراجیکٹ پر عمل پیرا ہے جس کی بدولت یہ خاندان آمدن کے ساتھ ساتھ خوراک و غذا کا تحفظ بھی یقینی بنا سکیں گے۔

پراجیکٹ کے تحت آب و ہوا سے مطابقت رکھنے والے طریقوں، ٹیکنالوجی کے استعمال، معیاری ترسیل اور اس طرح کے زراعت سے متعلق دیگر ضروری امور پر بھی توجہ دی جا رہی ہے۔