عمران خان پر قاتلانہ حملہ، جوائنٹ انویسٹی گیشن ٹیم کے نام فائنل

چیئرمین تحریک انصاف عمران خان پر وزیرآباد میں ہونے والے قاتلانہ حملے کی تحقیقات کے لیے جوائنٹ انویسٹی گیشن ٹیم کے نام فائنل کر لیے گئے۔ جے آئی ٹی کیلئے وزیر قانون کی لا اینڈ آرڈر کمیٹی پر اتفاق نہ ہوسکا۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق نئے پولیس افسران پر مبنی جوائنٹ انویسٹی گیشن ٹیم بنا دی گئی۔ پولیس افسران کے نئے ناموں کا نوٹیفکیشن جاری کر دیا گیا۔

نوٹیفکیشن کے مطابق ڈی آئی جی اسٹیبلشمنٹ طارق رستم جے آئی ٹی کے سربراہ مقرر کیے گئے ہیں جبکہ ارکان میں آر پی او ڈی جی خان سید خرم، ڈی آئی جی احسان اللہ چوہان، ڈی پی او ظفر بزدار، ایس ایس پی نصیب اللہ شامل ہیں۔

اس سے قبل پنجاب کابینہ کی کمیٹی برائے لا اینڈ آرڈر نے متفقہ طور پر جے آئی ٹی کے نام فائنل کیے تھے۔ چیئرمین کمیٹی نے چیف سیکرٹری اور دیگر افسران کے ساتھ نام فائنل کیے تھے۔

جے آئی ٹی کی سربراہی ایڈیشنل آئی جی ہائی ویز پیٹرول ریاض نذیر گاڑھا کے سپرد کی گئی تھی جبکہ ڈی آئی جی ناصر محمود ستی، ڈی آئی جی احسان اللہ چوہان اور ایس ایس پی نصیب اللہ کو کمیٹی میں شامل کیا گیا تھا.