باجوڑ : پولیس کا امن و امان کے حوالے سے اہم بیٹک

باجوڑ موجود صورتحال کے پیش نظر ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر باجوڑ کا تمام ایس۔ڈی۔پی۔اوز اور ایس۔ایچ۔اوز کیساتھ اہم بیٹک منعقد ہوا.

میڈیا رپورٹس کے مطابق ضلع بھر میں امن و امان کے صورتحال کے پیش نظر ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر باجوڑ نے اپنے دفتر میں تمام ایس۔ڈی۔پی۔اوز اور ایس۔ایچ۔اوز کیساتھ میٹنگ کی۔

میٹینگ میں ضلعی پولیس سربراہ نے تمام پولیس آفیسرز پر واضح کیا کہ پولیس اہلکاروں کو چوکس اور عسکریت پسندی کے خلاف پولیس اہلکاروں کو تیار رہنا ہوگا۔

انہوں نے کہا کہ ضلع ہذا میں کچھ شرپسند عناصر حالات خراب کرنے کے درپے ہیں اور وہ ہر روز کبھی کریکر بم، کبھی ہینڈ گرنیڈ کے زریعے علاقائی مشران کے گھروں کو نشانہ بناتا ہیں۔ جس سے علاقے میں خوف کے فضاء قائم کرنے کی کوشش کی جارہی ہے۔

ضلعی پولیس سربراہ نے مذید کہا کہ باجوڑ سکاؤٹس کیساتھ حالیہ مشترکہ اپریشن کے وجہ سے ضلع بھر میں جرائم میں کافی حد تک کمی ائی ہیں۔ لہذا باجوڑ سکاؤٹس کیساتھ مشترکہ اپریشن بدستور جاری رہے گا۔

ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر نے میٹنگ میں ذیل ضروری ہدایات جاری کی اور کہا کہ غفلت کے مرتکب اہلکاروں کیخلاف قانونی کارروائی کی جائے گی۔
جس میں بھتہ خوری کے کال پر فوراً FIR درج کیا جائے گا۔

انہوں نے مزید مزید کہا کہ پولیس افسران/اہلکاران ڈیوٹی کے دوران SOP کے مطابق حفاظتی سازو سامان کا استعمال یقینی بنائیں جبکہ کسی بھی خفیہ اطلاع پر فورآ ایکشن لیا جائے گا۔

انہوں نے مزید ہدایت کی کہ دن رات اپنے چوکیوں کے اردگرد ماحول پر کڑی نظر رکھی جائے اور ساتھ ہی ٹارچ کا استعمال یقینی بنائیں۔

ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر نے میٹنگ میں دربنو ٹو طور غنڈئی مین شاہراہِ پر مستقل طور پر چار مختلف جگہوں پر پولیس کی ناکہ بندیوں کا فیصلہ کیاگیا جس پر اج سے ہی عملدرآمد کی ہدایت کر دی گی ہیں ۔

انہوں نے کہا کہ مین روڈ پر واقع پیٹرول پمپوں اور بینکوں میں موجود CCTV کیمروں کو چیک کیا جائے۔ تاکہ کسی بھی ناخوشگوار واقعے کے صورت میں ان سے مدد حاصل کی جائے۔

میٹنگ میں مزید کہا کہ جن مشران کو سیکیورٹی تھریٹ موصول ہو چکا ہے۔ ان کا سیکیورٹی اڈیٹ کیا جائے۔ ساتھ ہی ان کیساتھ موجود پولیس اہلکاروں کو ان کیساتھ بطورے سیکیورٹی گارڈ ڈیوٹی کے پابند بنائیں دوسرے کام کے صورت میں فورآ کلوز کیا جائے۔

پولیس کے سربراہ نے کہا کہ ڈیوٹی کے دوران پولیس اہلکاروں پر سمارٹ فون کے استعمال پر پابندی ہیں، تو لہذا اپنے ماتحت اہلکاروں کو مذکورہ ارڈر کی پاسداری یقینی بنائیں۔

اخیر میں سربراہ نے کہا کہ مختلف مقدمات میں ملوث مفرور ملزمان کی گرفتاری یقینی بنائیں تاکہ وہ جلد از جلد کیفر کردار تک پہنچ سکے۔