قومی صحت کارڈ سے کن بیماریوں کا مفت علاج ممکن ہے؟

Share on facebook
Share on pinterest
Share on twitter
Share on linkedin
Share on whatsapp

ملک بھر میں قومی صحت کارڈ کا اجرا کردیا گیا ہے، یہ جاننا ضروری ہے کہ قومی صحت کارڈ کس طرح کام کرتا ہے۔ قومی صحت کارڈ کے تحت ملک بھر کے شہری مخصوص اسپتالوں میں اپنا مفت علاج کروا سکتے ہیں۔

اس کارڈ کے تحت پہلے فی خاندان کو سالانہ 7 لاکھ روپے کی طبی سہولیات حاصل تھیں تاہم اب یہ حد بڑھا کر 10 لاکھ روپے کردی گئی ہے۔

قومی صحت کارڈ میں امراض قلب، ذیابیطس سے متعلق پیچیدگیاں جن میں اسپتال میں داخل ہونا پڑے، حادثاتی چوٹیں ، سڑک کا حادثہ ، ہڈیوں کی ٹوٹ پھوٹ. جلنے کا علاج ، اعصابی نظام کا علاج، گردوں کا علاج اور پیوند کاری ، سرطان، تھیلیسیمیا ، یرقان، حمل یا زچگی شامل ہیں

حکومتی ویب سائٹ پر ان تمام سرکاری و نجی اسپتالوں کی فہرست جاری کی گئی ہے جو قومی صحت کارڈ پر علاج کی سہولیات فراہم کر رہے ہیں۔

اس حوالے سے معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر فیصل سلطان کا کہنا ہے کہ کارڈ صوبہ سندھ کے علاوہ ملک بھر کے لیے جاری کیا جاچکا ہے، تاہم مختلف ڈویژنز میں اس کی رجسٹریشن فی الحال فعال نہیں۔

انہوں نے بتایا کہ 31 مارچ تک ملک بھر میں اس کی رجسٹریشن فعال ہوجائے گی جس کے بعد ملک کے تمام شہری مفت علاج کی سہولیات حاصل کرسکیں گے۔