بنوں : پولنگ اسٹیشن پر حملہ میں صوبائی وزیر، بھائی اور بیٹے پر مقدمہ

Share on facebook
Share on pinterest
Share on twitter
Share on linkedin
Share on whatsapp

بنوں میں پولنگ اسٹیشن پر حملہ کرنے کے جرم میں صوبائی وزیر شاہ محمد خان وزیر کے بھائی سمیت 21 افراد پر مقدمہ درج کرلیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق خیبر پختونخوا کے جنوبی ضلع بنوں کی تحصیل بکاخیل میں بلدیاتی انتخابات کے روز پولنگ اسٹیشن پر حملے میں ملوث صوبائی وزیر شاہ محمد خان وزیر کے بھائی سمیت 21 افراد پر مقدمہ درج کرلیا گیا ہے۔

مقدمے میں صوبائی وزیر شاہ محمد خان وزیر کا بیٹا امیدوار تحصیل بکا خیل ملک مامون خان بھی شامل ہے.

مقدمے میں چار پولیس اہلکار بھی شامل ہیں، جو صوبائی وزیر کے بھائی ملک گل باز خان کے ساتھ ڈیوٹی پر تعنیات تھے، مقدمے میں تمام ملزمان پر تحصیل بکا خیل کے چند پولنگ اسٹیشنز سے انتخابی مواد چھیننے کا الزام عائد کیا گیا ہے۔

دوسری جانب بنوں کی تحصیل بکاخیل میں انتخابات ملتوی ہونے کے خلاف کیس کی سماعت ہوئی، ڈی آر او اور ریٹرننگ افسر الیکشن کمیشن میں پیش ہوئے۔

جے یو آئی کے وکیل کامران مرتضیٰ نے الیکشن کمیشن میں الزام عائد کیا کہ صوبائی وزیر ٹرانسپورٹ مسلح افراد کے ہمراہ پولنگ میٹریل لے کر فرار ہوئے.

انہوں نے کہا کہ ان کے بھائی اور بیٹے بھی اس کارروائی میں براہ راست ملوث ہیں، جب کہ ایف آئی آر میں وزیر اور انکے بھائی کی جگہ پولیس نے نامعلوم افراد درج کیا۔