عالمی یوتھ ایوارڈ 2021ء میں پاکستانی طالبہ فاتح قرار

Share on facebook
Share on pinterest
Share on twitter
Share on linkedin
Share on whatsapp

راؤنڈ ٹیبل گلوبل یوتھ ایوارڈ میں پاکستانی طالبہ اسماء طارق فتحمند ہوئی ہیں۔ عالمی یوتھ ایوارڈ کے لیے راؤنڈ ٹیبل گلوبل تقریب کا انعقاد برطانیہ میں ہوتا ہے۔

تقریب اور اس میں دیئے جانے والے ایوارڈز ایسے نوجوان افراد کو دیئے جاتے ہیں، جنہوں نے اپنے فیلڈ میں قائدانہ صلاحیتوں کو بروئے کار لاتے ہوئے کچھ کر دکھایا ہو۔ یہ ایوارڈ پچھلے دس سال سے منعقد کیا جا رہا ہے۔

واضح رہے کہ اس ایوارڈ شو میں 35 سے زائد ممالک کے نوجوان لڑکے لڑکیاں شرکت کر رہی تھیں۔ تقریب میں بیس منصف تھے۔ جو مقررہ معیار پر مقابلے میں شریک نوجوانوں کو ان کی کاکردگی پر پرکھ کر فیصلہ کرتے ہیں۔ مقابلے کے تین زمرہ جات ہوتے ہیں۔ ایک زمرہ تعلیم کا ہوتا ہے

یہ ان شرکاء کو دیا جاتا ہے جنہوں نے کم عمری میں تعلیم میں کوئی اہم کارنامہ سرانجام دیا ہو۔ مقابلے میں دوسرا زمرہ تخلیق کا ہوتا ہے۔ جس کا فیصلہ شرکاء کے تخلیقی کام کو مدنظر رکھ کر کیا جاتا ہے۔ اسی طرح تیسرا زمرہ قیادت کا ہے۔

تمام شرکاء اپنے اپنے کیے گئے کام کو اپنی متعلقہ کیٹیگری میں پیش کرتے ہیں۔ پھر جج اپنے مقررہ معیارات پر اسے پرکھ کر اس کی رینکنگ کرکے ان کی جیت اور شکست کا فیصلہ کرتے ہیں۔یہ مقابلہ نو عمر جوانوں کے لیے ہے، جس کی حد پندرہ سال سے پچیس سال ہے۔ اس عمر کے نوجوان دنیا بھر سے اس مقابلے میں شرکت کرسکتے ہیں۔

اگر آپ مطلوبہ معیار اور زمرہ جات پر پورا اترتے ہیں تو آپ اس میں شامل ہوسکتے ہیں۔ پاکستانی طالبہ اسماء طارق نے یہ ایوارڈ لیڈرشپ ان امپاورمنٹ کے زمرے میں جیتا ہے۔ پچھلے سال کوڈ میں یونیورسٹی کے دوستوں کے ساتھ مل کر انٹرنیشنل پلیٹ فارم کے ساتھ پاکستان لیڈر شپ پروگرام کا آغاز کیا۔

ہمارے پاس آفس نہیں تھے، ہم نے اپنے کمروں کو کلاس روم میں تبدیل کر دیا اور آن لائن کلاس کی مدد سے پاکستان کے دور دراز علاقوں سے ہزار سے زائد سکول اور کالج کے بچوں کو لیڈر شپ کی تربیت دی۔۔۔

بنگلہ دیش کے روہینگیا کیمپوں کے لیے بھی آن لائن واٹس ایپ کلاس کا آغاز کیا اور ہزاروں افراد کی تربیت کی۔ تعلیم کا مقصد صرف پڑھانا اور رٹا لگوانا ہی نہیں ہوتا بلکہ بچوں کی شخصی تربیت بھی بہت ضروری ہے۔ ہمیں شعور کی روشنی کو پھیلانا ہے۔

یہ ضروری نہیں کہ ہر کہانی کا آغاز خوشگوار ہو، مسکراہٹیں بکھیرتا ہو، مگر ہر کہانی میں خدا آپ کو ایک بار چوائسس ضرور دیتا ہے کہ آؤ سنبھالو اپنی کہانی کو اور لے جاو جس طرف اور جہاں تم اسے لے جانا چاہتے ہیں۔

ہاں ہوسکتا ہے، تمہیں یہ چوائسس نہ ملی ہوں کہ تمہیں کس طرح، کہاں اور کیسے اپنی زندگی کی کہانی شروع کرنی ہے، مگر یہ تمہارے اختیار میں ہے کہ تم کہاں اور کیسے اس کہانی کو ختم کرنا چاہتے ہو۔

زندگی میں چیزیں، حالات سب اوپر نیچے ہوتے رہتے ہیں مگر کبھی ان حالات کی وجہ سے ہمت نہیں ہارنی، رکنا نہیں، بس لگے رہو، اردگرد سے سیکھتے رہو اور آگے بڑھتے رہو۔