افغان شہریوں کے لیے 16 کروڑ مالیت کی ادویات حکومت کے حوالے

Share on facebook
Share on pinterest
Share on twitter
Share on linkedin
Share on whatsapp

پاکستانی فارماسیوٹیکل کمپنیوں کی جانب سے افغان شہریوں کے لیے 16 کروڑ روپے مالیت کی ادویات پر مبنی امدادی کھیپ آج جمعرات کو حکومت کے حوالے کر دی گئی۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد میں منعقدہ ایک تقریب میں دوا ساز کمپنیوں کی جانب سے افغان شہریوں کے لیے کروڑوں روپے مالیت کی ادویات حکومت کے حوالے کی گئی ہیں۔

اس سلسلے میں پاکستان فارماسیوٹیکل مینوفیکچرنگ ایسوسی ایشن کے ایک وفد نے معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر فیصل سلطان سے ملاقات کی، جس میں ڈرگ ریگولیٹری اتھارٹی کے سی ای او ڈاکٹر عاصم رؤف بھی موجود تھے۔

معاون خصوصی ڈاکٹر فیصل سلطان نے پی پی ایم اے کی کوششوں کو سراہا، اور کہا افغانستان ہمارا بردار پڑوسی ملک ہے، افغانستان کے عوام کے لیے ادویات کا تحفہ مشکلات میں کمی کا باعث بنے گا۔

چیف ایگزیکٹو آفیسر ڈریپ ڈاکٹر عاصم نے اس موقع پر کہا کہ ادویات کی کھیپ جلد افغانستان روانہ کر دی جائے گی۔ انھوں نے کہا کہ افغانستان بھجوائی جانے والی ادویات میں بخار، نزلہ زکام، امراض قلب، شوگر، جان بچانے والی ادویات شامل ہیں۔

گزشتہ ماہ افغان وزیر صحت کی سربراہی میں ایک وفد نے پاکستان کا دورہ کیا تھا، افغان وفد نے انسانی ہمدردی کی بنیاد پر ادویات فراہمی کی اپیل کی تھی۔

یاد رہے گزشتہ ماہ کے آخر میں پاکستان نے افغان وزیر صحت کی درخواست پر افغانستان کو جان بچانے والی ادویات عطیہ کرنے کا اعلان کرتے ہوئے افغان مریضوں کی سہولت کے لیے بارڈر پر ڈاکٹرز بھی تعینات کر دیے تھے۔