پاکستان اور افغانستان کے میچ کیلئے سینئر کھلاڑی فکر مند

Share on facebook
Share on pinterest
Share on twitter
Share on linkedin
Share on whatsapp

قومی کرکٹ ٹیم کے سابق چیف سلیکٹر انضمام الحق نے افغانستان سے میچ کیلئے قومی ٹیم کو مشورہ دیتے ہوئے کہا کہ پاکستان جیسے کھیل رہاہے افغانستان سے اسی طرح کھیلنا چاہیے۔

تفصیلات کے مطابق قومی کرکٹ ٹیم کے سابق چیف سلیکٹر انضمام الحق نے افغانستان کے ساتھ میچ کو آسان نہ لینے کا مشورہ دیا ہے۔

ٹی وی پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے انضمام الحق نے کہا کہ افغان کرکٹ ٹیم کے کھلاڑی فرنچائز کے لیے بھی کھیل رہے ہیں لہذا افغان کرکٹ ٹیم کو ہلکا نہیں لیاجاسکتا۔

واضح رہے کہ ٹی ٹوئنٹی ورلڈکپ میں پاکستان نے بھارت اور نیوزی لینڈ کو شکست دی جس کے بعد اس کا سامنا افغانستان سے ہے۔

ٹی ٹوئنٹی ورلڈکپ کے گروپ 1 میں پاکستان 4 پوائنٹس کے ساتھ پہلی پوزیشن پر براجمان ہے۔

دسری جانب قومی ٹیم کے سابق کپتان انضمام الحق اور ٹیسٹ کرکٹر مشتاق احمد کو پاکستان کے افغانستان سے میچ کی فکر لگ گئی۔

پاکستان کی نیوزی لینڈ کے خلاف 5 وکٹ سے فتح پر جیو نیوز کے پروگرام جشن کرکٹ میں انضمام الحق اور مشتاق احمد نے اظہار خیال کیا۔

انضمام الحق نے کہا کہ افغانستان کو ایونٹ میں کبھی بھی ہلکا نہیں لے سکتے ہیں، پاکستان کو اس کے ساتھ پوری تیاری کے ساتھ کھیلنا ہوگا۔

مشتاق احمد نے کہا کہ مجھے سب سے زیادہ فکر افغانستان کے خلاف میچ کی ہے، جس کے پاس اچھے اسپنر اور تجربہ کار بولرز ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ ہر میچ میں پچھلے میچز کو بھلا کر کھیلنا پڑے گا، افغانستان کے کھلاڑی دنیا بھر میں کرکٹ کھیلتے ہیں، قومی ٹیم کو ان کے خلاف ہوم ورک کرکے میدان میں اترنا ہوگا۔

قومی ٹیم کے سابق کپتان انضمام الحق اور ٹیسٹ کرکٹر مشتاق احمد کو پاکستان کے افغانستان سے میچ کی فکر لگ گئی۔

پاکستان کی نیوزی لینڈ کے خلاف 5 وکٹ سے فتح پر جیو نیوز کے پروگرام جشن کرکٹ میں انضمام الحق اور مشتاق احمد نے اظہار خیال کیا۔

انضمام الحق نے کہا کہ افغانستان کو ایونٹ میں کبھی بھی ہلکا نہیں لے سکتے ہیں، پاکستان کو اس کے ساتھ پوری تیاری کے ساتھ کھیلنا ہوگا۔

مشتاق احمد نے کہا کہ مجھے سب سے زیادہ فکر افغانستان کے خلاف میچ کی ہے، جس کے پاس اچھے اسپنر اور تجربہ کار بولرز ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ ہر میچ میں پچھلے میچز کو بھلا کر کھیلنا پڑے گا، افغانستان کے کھلاڑی دنیا بھر میں کرکٹ کھیلتے ہیں، قومی ٹیم کو ان کے خلاف ہوم ورک کرکے میدان میں اترنا ہوگا۔

انضمام الحق نے کہا کہ ہر میچ آسانی سے نہیں جیتا جاسکتا، نیوزی لینڈ کو کم رنز پر روکنا قومی ٹیم کی زبردست بولنگ کی نشانی ہے۔

انہوں نے کہا کہ آصف علی فنشر نہیں، میچ ختم کرنے کی ذمے داری شعیب ملک اور محمد حفیظ کی ہے۔