کے پی بم ڈسپوزل یونٹ پربننے والی فلم نے ایمی ایوارڈ جیت لیا

Share on facebook
Share on pinterest
Share on twitter
Share on linkedin
Share on whatsapp

خیبرپختونخوا کے بم ڈسپوزل یونٹ پر بنی دستاویزی فلم ’آرمڈ ود فیتھ‘ ٹیلی وژن ڈراموں اور دستاویزی فلموں کے لیے دیا جانے والا سب سے اعلیٰ ’ایمی‘ ایوارڈ حاصل کرنے میں کامیاب ہوگئی۔

،آرمڈ ود فیتھ، کوایمی اکیڈمی نے دنیا بھر کے معروف نیوز ٹی وی چینلز پر نشر ہونے والی دستاویزی فلم کے ساتھ نامزد کیا تھا۔ پاکستانی دستاویزی فلم کوالجزیرہ پرنشرکیاگیا تھا اوراس ڈاکیومینٹری کو ’حکومت اورسیاست‘ کی کیٹیگری میں نامزد کیا گیا تھا۔

پاکستانی ڈاکیومینٹری کے ساتھ دیگر دستاویزی فلموں کو بھی اسی کیٹیگری کے لیے نامزد کیا گیا تھا لیکن پاکستانی فلم ایوارڈ جیتنے میں کامیاب ہوگئی۔ ایمی نیوزاینڈ ڈاکیومینٹری ایوارڈز کی تقریب امریکا میں ہوئی جس میں مجموعی طور پر 30 کیٹیگریزمیں دستاویزی فلموں کو ایوارڈز دیے گئے۔

،آرمڈ ود فیتھ، کو گزشتہ برس ریلیز کیا گیا تھا اور اس میں خیبرپختونخوا بم ڈسپوزل یونٹ کے اہلکاروں کی جان پر کھیل کر بموں کو ناکارہ بنانے کی خدمات کو دکھایا گیا تھا۔

دستاویزی فلم بم ڈسپوزل یونٹ پر بنائی جانے والی پہلی کوشش تھی اوراس میں پولیس اور بم ڈسپوزل یونٹ سے وابستہ افسران اور عہدیداروں کے درپیش مسائل اور خطرات سے آگاہ کیا گیا تھا۔

اس فلم کی ہدایات اسد فاروقی نے دی ہیں جو اس فلم کو بنانے سے قبل آسکر ایوارڈ یافتہ شرمین عبید چنائے کے ساتھ ایوارڈ یافتہ فلموں ’سیونگ فیس، گرل ان دا ریور‘ جیسی فلموں پر ایک ساتھ کام کر چکے ہیں۔

اسد فاروقی نے جہاں ’آرمڈ ود فیتھ‘ ڈاکیومینٹری کی ہدایات دیں، وہیں وہ اس فلم کے شریک پروڈیوسر بھی ہیں، ان کے ساتھ اس فلم کو شرمین عبید چنائے اور حیا فاطمہ سمیت دیگر نے پروڈیوس کیا ہے۔