سوشل میڈیا صارفین پر سخت حکومتی پابندیاں عائد

Share on facebook
Share on pinterest
Share on twitter
Share on linkedin
Share on whatsapp

سوشل میڈیا ترمیم شدہ رولز 2021ء جاری کر دیا گیا جس کے مطابق سوشل میڈیا ادارے پاکستان کے وقار و سلامتی کے خلاف مواد ہٹانے کے پابند ہوں گے۔

انفارمیشن ٹیکنالوجی و ٹیلی کمیونیکیشن کی وزارت نے نوٹیفیکیشن جاری کر دیا ہے، جس کے مطابق انتہاء پسندی، دہشت گردی، نفرت انگیز، فحش اور پرتشدد مواد کی لائیو اسٹریمنگ پر پابندی ہوگی۔

وفاقی وزیر انفارمیشن ٹیکنالوجی امین الحق نے اس حوالے سے کہا کہ پاکستانی صارفین اور سوشل میڈیا اداروں کے مابین رابطوں کیلئے رولز اہم کردار ادا کریں گے۔

ترمیم شدہ رولز کے تحت پاکستانی صارفین کو آئین کی شق 19 کے تحت اظہار رائے کی مکمل آزادی ہوگی۔

نوٹیفیکیشن کے مطابق سوشل میڈیا کمپنیوں کو پاکستانی قوانین اور سوشل میڈیا صارفین کے حقوق کی پاسداری کرنا ہوگی۔

دوسروں کی نجی زندگی، ثقافتی اور اخلاقی رجحانات سمیت بچوں کی ذہنی و جسمانی نشوونما اور اخلاقیات تباہ کرنے سے متعلق مواد پر پابندی ہوگی۔

رپورٹ کے مطابق یو ٹیوب، فیس بک، ٹک ٹاک، ٹوئٹر، گوگل پلس سمیت تمام سوشل میڈیا ادارے رولز کے پابند ہوں گے۔