ہائیکورٹ کا ڈی سی مہمند کو 50 ہزار روپے جرمانہ

Share on facebook
Share on pinterest
Share on twitter
Share on linkedin
Share on whatsapp

پشاور ہائی کورٹ کے چیف جسٹس قیصر رشید ڈپٹی کمشنر مہمند پر برہم، ڈی سی غلام حبیب کو پچاس ہزار روپے جرمانہ کر دیا۔

زرائع کے مطابق چیف جسٹس نے ڈی سی مہمند کو آج پیش ہونے کا حکم دیا تھا، ڈی سی مہمند نے پشاور ہائی کورٹ کے احکامات ہوا میں اڑا دیئے تھے۔

زرائع کا کہنا ہے کہ ڈی سی مہمند نے 28 روز پہلے ملاگوری قوم کے بے گناہ 14 افراد کو 3 ایم پی او کے تحت گرفتار کیا تھا، متاثرہ خاندانوں نے ہائی سے رجوع کیا تھا جس پر جسٹس رشید نے رہائی کے احکامات جاری کئے تھے لیکن ڈی سی نہ مانے۔

زرائع کے مطابق ڈی سی مہمند ملاگوری قوم سے زبردستی جرگہ کا اختیار لینا چاہتے تھے جس پر 3 ایم پی او کے تحت گرفتاریاں کی گئی تھیں۔

ملاگوری قوم نے اس سے پہلے ڈی سی مہمند پر زمین کے لین دین میں مخالف فریق کے ساتھ پارٹی بننے اور ان کے خلاف یکطرفہ ظالمانہ کارروائی کے الزامات لگائے تھے۔