پشاور میں ڈینگی بھی سر اٹھانے لگا، کئی شہری متاثر

Share on facebook
Share on pinterest
Share on twitter
Share on linkedin
Share on whatsapp

پشاور میں کورونا کے بعد اب ڈینگی بھی سر اٹھانے لگا ہے اور صوبے کے دوسرے بڑے اسپتال خیبر ٹیچنگ اسپتال میں ڈینگی کے 21 متاثرہ مریضوں کو داخل کرادیا گیا ہے۔

خیبر ٹیچنگ اسپتال میں ڈینگی کے متاثرہ مریضوں میں 9 خواتین، 18 سال سے کم عمر 2 افراد اور 10 مرد شامل ہیں۔

اسپتال انتظامیہ کے مطابق مریضوں کا تعلق پشاور کے ملحقہ مختلف علاقوں سے ہے جن میں تہکال، اکیڈمی ٹاون، سفید ڈھیری، دانش آباد، سربند اور لنڈی کوتل وغیرہ شامل ہیں۔

بتایا جارہا ہے کہ خیبر ٹیچنگ ہسپتال میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ڈینگی کے 1113 ٹیسٹ کئے گئے جس میں 130 مثبت اور 983 منفی ٹیسٹ آئے ہیں جب کہ یکم ستمبر سے 19 ستمبر تک 16 ہزار 23 ڈینگی ٹیسٹ کئے گئے ہیں جس میں 2 ہزار110 مثبت اور 13 ہزار 913 ٹیسٹ منفی آچکے ہیں۔

اسپتال ترجمان محمد سجاد کا کہنا ہے کہ ہسپتال میں تمام ڈینگی کے مریضوں کو اسپتال کے میڈیکل وارڈ میں پروٹوکول کے مطابق علاج معالجہ اور سہولیات فراہم کئے جا رہے ہیں۔

اسی طرح حیات اباد میڈیکل کمپلیکس میں بھی ڈینگی کے متاثرہ مریضوں کی تعداد میں گزشتہ دو روز میں اضافہ ہوا ہے۔

اسپتال میں ڈینگی کے متاثرہ مریضوں کی تعداد 11 ہوگئی۔ صوبے میں رواں سال 4 ہزار 442 ڈینگی کے کیسز رپورٹ ہوچکے ہیں، جن میں 305 ڈینگی کے مصدقہ کیسز ہیں۔