تاریخ میں پہلی بار وزیرستانی خاتون کا پریس کانفرنس

Share on facebook
Share on pinterest
Share on twitter
Share on linkedin
Share on whatsapp

جنوبی وزیرستان کے تاریخ میں پہلی بار ایک گریجویٹ وزیرستانی خاتون نے لڑکیوں کی تعلیم کے حوالے سے وانا پریس کلب میں پریس کانفرنس کی ہے.

انہوں نے کہا کہ تحصیل برمل علاقہ رغزائی خوجل خیل گاؤں محکمہ تعلیم اور انتظامیہ کی نظروں سے اوجھل ہے، ”پانچ سو گھرانوں پر مشتمل گاؤں کے سات سو کے قریب بچے تعلیم جیسی نعمت سے محروم ہیں۔

انہوں نے کہا کہ میں خود گریجویٹ ہوں لیکن بدقسمتی سے نوکری نہ ملنے کی وجہ سے بے روزگار ہوں کیونکہ نوکریاں حکومتی پالیسی کے تحت صرف اور صرف ملک، خان اور خوانین کو دی جاتی ہیں کیونکہ یہاں اسی نظام کو فوقیت حاصل ہے۔

مسماۃ (ر) بی بی نے کہا کہ کیڈٹ کالجوں میں بھی ملک، خان اور ٹھیکیدار لوگوں کو سپیشل کوٹہ دیا گیا ہے، باقی کے ذہین اور غریب بچوں کو چانس بمشکل ملتا ہے۔

آخر میں (ر) بی بی نے اعلیٰ حکام سے لڑکیوں کے لیے مذکورہ علاقے میں تعلیمی ادارے کا مطالبہ کیا۔