پاراچنار : قبائلی عمائدین کا جائیداد پر ترقیاتی کاموں کو فوری طور پر روکنے کا مطالبہ

Share on facebook
Share on pinterest
Share on twitter
Share on linkedin
Share on whatsapp

ضلع کرم کے قبائلی عمائدین نے لوئر کرم میں ان کی جائیداد میں سرکاری سکیموں اور ترقیاتی کاموں کو فوری طور پر روکنے کا مطالبہ کیا ہے اور قومی جائیداد پر قبضہ کرانے کی کوشش کو افسوس ناک قرار دیا ہے۔

پاراچنار میں مشترکہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے حاجی رحمت حسین، سجاد حسین، عادل حسین، نوابزادہ ڈاکٹر سید حسین، نوابزادہ حاجی طاہر حسین اور دیگر رہنماؤں نے لوئر کرم مت خوزہ میں ان کی جائیداد میں ناجائز ترقیاتی کاموں اور تعمیرات پر افسوس کا اظہار کیا.

انہوں نے کہا کہ ہمارے علاقہ مت خوزہ سنگینہ جہاں بار بار خونریز جھڑپیں ہوئی ہیں، وہاں ٹیوب ویل اور دیگر ترقیاتی کاموں کو کسی صورت برداشت نہیں کیا جائے گا، حکومت ہمارے علاقوں میں اس قسم کی سرگرمیوں سے اجتناب کریں اور ٹیوب ویل کا کام فوری بند کیا جائے۔

رہنماؤں نے سابق ایم این اے اور دیگر افراد کی جانب سے قومی کمیٹی کو قبضہ گروپ کا نام دینے پر افسوس کا اظہار کیا اور کہا کہ سرکار کی جانب سے مقرر شدہ کمیشن نے تقسیم کیا ہے.

انہوں نے کہا کہ کمیشن کی تقسیم کا فیصلہ سب کیلئے قابل احترام ہے لیکن بعض عناصر قومی اور شاملاتی اراضی پر ناجائز قبضہ کرانے کیلئے مختلف قسم کے ہتھکنڈے استعمال کررہے ہیں۔

رہنماؤں نے کہا کہ ہم قومی عمائدین کے ساتھ قبائلی رہنماء اور سرکاری کمیشن کے ساتھ ہر کسی کو اپنا حق دلا رہے ہیں کیونکہ اس میں امیر و غریب سب کے حقوق ہیں۔