یوم دفاع پاکستان: مزار قائد پر گارڈز کی تبدیلی کی پر وقار تقریب

Share on facebook
Share on pinterest
Share on twitter
Share on linkedin
Share on whatsapp

ملک بھر میں آج یوم دفاعِ پاکستان بھرپور ملی جوش و جذبے سے منایا جا رہا ہے۔ مسلح افواج کے غازیوں اور شہدا کو سلام اور خراجِ عقیدت پیش کرنے کے لیے کراچی میں مزارقائد پر گارڈز کی تبدیلی کی تقریب جاری ہے۔

اس پر وقار تقریب میں مزار قائد پرگارڈز کے فرائض پاک فضائیہ کےکیڈٹس نے سنبھال لیے۔ 6 ستمبر 1965ء جب دشمن بھارت نے بغیر اعلان کیے پاکستان پر حملہ کر دیا.

اس دن پاک افواج کےدلیر اور جری جوانوں نے اپنی پیشہ ورانہ مہارت کا شاندار مظاہرہ کیا اور جذبہ حب الوطنی کے تحت بےدریغ لڑتے ہوئے دشمن کے دانت کھٹے کر دیے۔

65ء کی جنگ کے شہدا کی لازوال قربانیوں کو خراجِ عقیدت پیش کرنے کیلئےلاہور کینٹ میں یادگارِ شہدا پر پُروقار تقریب ہوئی جبکہ گیریژن کمانڈر نے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کی طرف سے پھول چڑھائے اور پاک فوج کے چاق چوبند دستے نے سلامی پیش کی۔

یادگار شہدا کے ساتھ آرمی میوزیم بھی بنایا گیا ہے جس میں جنگ ستمبر کے دوران دشمن سے چھینے گئے ہتھیار رکھنے کے علاوہ تحریک پاکستان کی تصویری منظر کشی بھی کی گئی ہے۔

میوزیم کے مختلف حصوں کوشہدا کارنر، نشانِ حیدر گیلری، پاکستان کی جنگی تاریخ، دنیا کے بلند ترین جنگی محاذ سیاچن پر زندگی، کشمیر کارنر، نئی قوم کی تشکیل، قائد اور افواج، دہشت گردی کے خلاف جنگ، پاکستان کا اقوام متحدہ امن مشن میں کردار، اقلیتوں کی قومی تعمیر میں کاوشیں اور قربانیاں کے نام دیے گئے ہیں۔

آرمی میوزیم میں ہر قدم پر قبضے میں لیا گیا دشمن کا سامان اس بات کی گواہی دے رہا ہے کہ قوم کے بہادر سپوتوں نے کس جواں مردی کے ساتھ دشمن کے ناپاک عزائم کو خاک ملایا۔