وزیراعظم عمران خان کل طورخم بارڈر کا دورہ کریں گے

Share on facebook
Share on google
Share on twitter
Share on linkedin

وزیراعظم عمران خان کل پاک افغان سرحد طورخم کا دورہ کریں گے۔

دورے کے موقع پروزیراعظم عمران خان طورخم 24 گھنٹے کھلارکھنے کے منصوبے کا افتتاح کریں گے جس کے لیے تمام ترانتظامات مکمل کرلیے گئے ہیں۔

ضلعی انتظامیہ کے مطابق سکیورٹی انتظامات کے تحت کل طورخم اور لنڈی کوتل بازار بند رہیں گے جبکہ پاک افغان شاہراہ پر کارگو گاڑیوں کی آمدورفت آج سے بند کردیا گیا ہے۔

وزیراعظم کے دورہ کے موقع پر لنڈی کوتل بازار سے طورخم تک چھوٹی گاڑیوں کی آمدورفت بھی بند رہیگی اور پاک افغان شاہراہ اور طورخم سرحد پر سیکورٹی فورسز کی اضافی نفری تعینات کی گئی ہے۔

یاد رہے کہ وزیراعظم عمران خان 29 جنوری 2019 کو ہدایات جاری کی تھی کہ 6 ماہ کے اندرطورخم بارڈر کو 24 گھنٹوں تک کھلا رکھنے کے لئے انتظامات کو یقینی بنایا جائیں۔ وزیراعظم کا کہنا تھا کہ یہ قدم دونوں برادر ممالک کے درمیان دوطرفہ تجارت اور عوام کے باہمی رابطے میں اہم کردار ادا کرے گا۔

ماہرین کے مطابق وزیراعظم عمران خان کے اس اقدام سے پاک افغان تجارت پر مثبت اثرات مرتب ہونگے۔ رپورٹس کے مطابق 2012 میں طورخم بارڈر کے ذریعے پاکستان اور افغانستان کے مابین سالانہ 350 ارب روپے کی تجارت ہوتی تھی جو کم ہو کر 2018 میں 120 ارب روپے تک آگئی۔