پاکستان میں افغان مہاجرین کے شکل میں پاکستان دشمن داخل ہو سکتے ہیں، شاہ محمود

Share on facebook
Share on pinterest
Share on twitter
Share on linkedin
Share on whatsapp

وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی نے کہا کہ اب افغانستان میں خدانخواستہ حالات خراب ہوتے ہیں تو ہم مزید افغان پناہ گزینوں کو رکھنے کے متحمل نہیں ہو سکے۔

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے اپنے بیان میں کہا کہ پناہ گزینوں کي آڑ میں پاکستان کے دشمن داخل ہو سکتے ہیں، ہم چاہتے ہیں کہ اہم ممالک سے مشاورت کے بعد متفقہ حکمت عملی اپنائی جائے، پاکستان اپنی ذمے داری احسن طریقے سے نبھا رہا ہے، ہم پرکب تک انگلیاں اٹھائی جاتی رہیں گی۔

انہوں نے کہا کہ افغانستان کی صورتحال بہتر ہونے کا سب کو فائدہ ہوگا، اگر خوانخواستہ افغانستان کی صورتحال بگڑتی ہے تو سب متاثر ہوں گے.

انہوں نے کہا کہ یہ سنہري موقع ہے کہ مشاورتی عمل کو آگے بڑھایا جائے، افغانستان میں امن بگڑا تو پڑوسی زیادہ متاثر ہوں گے، بھارت افغان امن عمل میں خلل ڈال رہا ہے۔

دریں اثنا دشنبے میں شنگھائی تعاون تنظیم کے وزرائے خارجہ کونسل اجلاس کے موقع پر افغان وزیر خارجہ محمد حنیف آتمر کیساتھ ملاقات میں انھوں نے افغان ہم منصب کو پاکستان کی جانب سے متحدہ اور پر امن افغانستان کی مستقل حمایت کا یقین دلایا۔

انہوں نے کہا کہ افغانستان میں شدت پسندی میں اضافے کا رجحان اور قیمتی انسانی جانوں کا ضیاع باعثِ تشویش ہے، ان پرتشدد کارروائیوں میں کمی لانے اور جنگ بندی کیلئے فوری اقدامات کرنے کی ضرورت ہے۔