وزیرخزانہ تیمور سلیم جھگڑا کا پاک افغان بارڈر کا دورہ

Share on facebook
Share on google
Share on twitter
Share on linkedin

خیبر پختونخوا کے وزیر خزانہ تیمور سلیم جھگڑا نے وفاقی اور خیبرپختونخوا کی حکومتوں کی جانب سے طورخم گیٹ کو آزمائشی بنیادوں پر آمد ورفت کے لئے 24 گھنٹے کھولنے کے بعد وہاں پر انتظامیہ کی جانب سے لوگوں کو فراہم کی جانے والی سہولیات کا جائزہ لینے کے لئے بدھ کے روز پاک افغان بارڈر پر واقع طورخم گیٹ کا دورہ کیا۔

اس موقع پر کمشنر پشاور شہاب علی شاہ، ڈپٹی کمشنر قبائلی ضلع خیبر محمود اسلم وزیر کے علاوہ فیڈرل بورڈ آف ریونیو، نیشنل ڈیٹا بیس اینڈ رجسٹریشن اتھارٹی، ایف آئی اے، سیکورٹی فورسز کے اعلیٰ حکام  اور مقامی انتظامیہ کے اہلکار بھی موجود تھے۔

وزیر خزانہ نے طورخم گیٹ پر لوگوں کی آمدورفت کا تفصیلی معائنہ کیا اور طورخم گیٹ کو 24 گھنٹے کھولنے کے بعد وہاں پر فراہم کی جانے والی سہولیات کا بھی جائزہ لیا۔

انہوں نے حکام کے ہمراہ طورخم گیٹ کے مختلف حصوں کا معائنہ کیا جہاں پر سہولیات کی فراہمی کے حوالے سے انہیں تفصیلی بریفنگ دی گئی۔

وزیر خزانہ نے طورخم گیٹ پر فراہم کی جانے والی سہولیات پر اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ طورخم گیٹ کو کھولنے سے نہ صرف بارڈر کے دونوں اطراف عوام کو ہر لمحہ آمد ورفت کی سہولت فراہم ہونے کے علاوہ خصوصی طور پر تجارت کو فروغ ملے گا۔

انہوں نے وزیر اعظم عمران خان کی خصوصی ہدایت پر طورخم گیٹ کو 24 گھنٹے کھولنے کے کے لئے وفاقی اور صوبائی حکومت کے اقدامات کو سراہتے ہوئے کہا کہ اس اقدام سے دونوں ملکوں کے عوام کی دیرینہ خواہش پوری ہونے کے علاوہ ملکی اور صوبائی معیشت کو بے پناہ سہارا ملے گا۔

تیمور سلیم جھگڑا نے کہا کہ طورخم بارڈر کے دن رات کھلے رہنے سے قبائلی ضلع خیبر اور دیگر ملحقہ علاقوں کے عوام کی تقدیر بدل جائے گی۔

بعد ازاں وزیر خزانہ تیمور سلیم جھگڑا نے وزیر اعظم عمران خان کی طرف سے عنقریب طورخم گیٹ کو 24 گھنٹے کھولنے کے باقاعدہ افتتاح کے حوالے سے کئے جانے والے انتظامات کا بھی تفصیلی جائزہ لیا اور حکام سے انتظامات بارے آگاہی حاصل کی۔

انہوں نے متعلقہ حکام کو افتتاحی تقریب کے لئے تمام تر انتظامات کو حتمی شکل دینے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ یہ اس علاقے اور یہاں کے عوام کی ترقی و خوشحالی کے لئے ایک عظیم لمحہ ہوگا اس لئے اس کے لئے شایان شان انتظامات کو یقینی بنایا جائے۔