حکومت نے سودی نظام کے خاتمے کیلئے سنجیدہ اقدامات شروع کر دیئے

Share on facebook
Share on pinterest
Share on twitter
Share on linkedin
Share on whatsapp

حکومت نے سودی نظام کے خاتمے کیلئے سنجیدہ اقدامات شروع کر دیئے۔ وزیراعظم عمران خان نے سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر کو اس حوالے سے علماء سے مشاورت کا ٹاسک دیدیا

ٹرائبل پریس کے مطابق سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر مختلف مکاتب فکر کے جید علمائے کرام سے ملاقاتیں کریں گے اور سود کے حوالے سے آراء لی جائیں گی۔

ذرائع کے مطابق مذہبی حلقوں کی جانب سے ملک میں جاری سودی نظام کو اللہ اور رسول سے جنگ قرار دیا جا رہا ہے اور حکومت سے مطالبہ کیا جا رہا تھا کہ ملک سے سودی نظام کا خاتمہ کر دیا جائے۔

یاد رہے کہ وفاقی شرعی عدالت کے فیصلے کے تحت 2001 تک سود کا کاروبار ختم ہونا تھا لیکن ابھی تک نہیں ہو سکا۔.

اس حوالے سے وزیراعظم عمران خان نے علماء کو یقین دہانی کروائی ہے کہ تمام مکاتب فکر کے جید علماء کی مشاورت سے سودی نظام کا خاتمہ کرکے متبادل معاشی نظام دیا جائے گا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر نے اس حوالے سے ممتاز عالم دین مفتی تقی عثمانی سے رابطہ بھی کیا ہے اور عیدالاضحیٰ کے بعد اسلام آباد میں علمائے کرام کی ایک خصوصی میٹنگ کا بھی اہتمام کیا گیا ہے،جس میں تمام مکاتب فکر کے علماء کومدعو کیا جائے گا۔