خیبر پختونخوا : امراض قلب اسپتال کو کالج آف فزیشن اینڈ سرجنز کی منظوری مل گئی

Share on facebook
Share on pinterest
Share on twitter
Share on linkedin
Share on whatsapp

خیبر پختونخوا کے واحد امراض قلب کے اسپتال نے کالج آف فزیشن اینڈ سرجنز پاکستان سے منظوری حاصل کرلی۔

پی آئی سی پاکستان کے مختصر عرصہ میں منظوری حاصل کرنے والا پہلا سرکاری اسپتال بن گیا۔

ترجمان رفعت انجم کے مطابق پشاور انسٹیٹیوٹ میں اب پوسٹ گریجویٹ (کارڈیک اسپیشلائزڈ) کورسز کی تربیت دی جا سکے گی۔

کالج آف فزیشن اینڈ سرجنز پاکستان نے اسپتال کے 4 شعبوں کو باقاعدہ منظوری دی ہے۔

ترجمان کا کہنا تھا کہ پشاور انسٹیٹیوٹ آف کارڈیالوجی کو 6 ماہ کے قلیل عرصے میں بہترین سروسز اور اسٹاف پر یہ اعزاز حاصل ہوا۔

اب تک 6 ماہ کے دوران 4 سو سے زائد اوپن ہارٹ سرجریز کی گئی ہیں۔ او پی ڈی میں 10 ہزار سے زائد مریضوں کا معائنہ کیا گیا۔

رفعت انجم نے مزید بتایا کہ پی آئی سی میں 16 سو سے زائد انجیو گرافی اور انجیو پلاسٹی پروسیجرز کیے گئے ہیں۔

اسپتال میں صحت کارڈ پلس کے تحت 22 سو سے زائد مریضوں کا مفت علاج کیا گیا۔