جنوبی وزیرستان میں قدرتی آفت سے جان بحق ہونیوالے افراد کے لواحقین میں امدادی چیک تقسیم

Share on facebook
Share on google
Share on twitter
Share on linkedin

جنوبی وزیرستان کے ضلعی ہیڈکوارٹر وانا میں اسیسٹنٹ کمشنر وانا نے سیلاب میں جان بحق ہونیوالے افراد کے لواحقین میں مدادی چیک تقسیم کردئے.جان بحق ہونیوالوں میں دو مرد اور تین خواتین شامل۔

دوسری جانب سیلاب اور ژالا باری سے ہونیوالے متاءثر ہ خاندان تاحال امداد کے منتظر ہیں۔

جنوبی وزیرستان کے ضلعی ہیڈکوارٹر وانا میں مون سون کی حالیہ طوفانی بارشوں کی وجہ سے 5 افراد جان بحق اور کئی گھروں کو نقصانات کے ساتھ ساتھ پھلوں اور سبزیوں کے باغات کو انتہائی نقصان پہنچا تھا،جس پر ایف،ڈی ایم اے اور مقامی انتظامیہ نے نقصانات کا جائزہ لیکر رپورٹ تیار کی تھی.

 آج اسیسٹنٹ کمشنر وانا نے جان بحق ہونیوالے 5 افراد کے لواحقین کو 3،3 لاکھ روپے کے چیک دئے،طوفانی بارشوں اور سیلاب کے نتیجہ میں بادام خان اور داوو کے علاوہ 3 خواتین شامل تھیں،تاہم دوسری جانب مون سون کے حالیہ طوفانی بارشوں اور ژالاباری سے متاءثر ہ دیگر افراد کا کہنا ہیں کہ 2 مہینے گذر جانے کے باوجود حکومت نے طوفانی بارشوں،سیلاب اور ژالاباری سے متاءثر ہ افراد کے ساتھ کوئی مالی معاونت نہیں کی ہے.

انہوں نے مطالبہ کیا ہے کہ اعلی حکام ہمارے قدرتی آفات سے ہونیوالے نقصانات کا جائزہ لیکر ازالہ کریں۔