محسود قبائل کا علاقائی مسائل کے حل کے لئے حکام کے ساتھ گرینڈ جرگہ

Share on facebook
Share on google
Share on twitter
Share on linkedin
جنوبی وزیرستان کے علاقہ مکین میں محسود قبائل کا علاقائی مسائل کے حل کے لئے پاک آرمی اور حکام کے ساتھ گرینڈ جرگہ کا انعقاد. پاک آرمی کی جانب سے مسائل کے حل کی یقین دہانی
 
جنوبی وزیرستان کے علاقہ مکین میں 21 بٹالین کے دفتر میں محسود قبائل کے مشران پر مشتمل جرگہ منعقد ہوا جس میں قبائلی مشران نے شرکت کی.
جرگہ سے ملک حاجی محمد، ملک شاہ جہان،ملک زمان بند خیل،ملک اے ڈی خان محسود اور دیگر نے خطاب کیا اور آرمی حکام کو علاقہ کے درپیش مسائل کے بارے میں بتایا.
 
قبائلی مشران نے پش زیارت سے پاک افغان سرحد تک شاہراہ بنانے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ ” اس شاہراہ کی تعمیر کی وجہ سے علاقہ محسود کی عوام مستفید ہو کر بے روزگار نوجوانوں کو ان کی گھروں کی دہلیز پر روزگار کے مواقع میسر ہونگے اور نوجوان نسل کو منفی سرگرمیوں سے دور رہنے میں معاون ثابت ہوگا”.
 
قبائلی عمائدین نے مطالبہ کیا کہ مذکورہ شاہراہ کی تعمیر کے لئے کور کمانڈر علاقہ کا دورہ کرکے پش زیارت سے پاک افغان سرحد تک اس فقید المثال منصوبہ کا سنگ بنیاد رکھیں جوکہ محسود قبائل پرپاک فوج کا احسان عظیم ہوگا.
 
اس موقع پر 21 بٹالین کے کمانڈنگ آفیسر کرنل عمر نے جرگہ سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ علاقہ کی تعمیر و ترقی کے لئے پائیدار امن کی ضرورت ہوتی ہے جہاں پر امن ہوتا ہے وہاں خوشحالی آتی ہے پاک آرمی اورقبائلی عوام نے امن کی بحالی میں بے تحاشا قربانیاں دی ہیں .
 
انہوں نے کہا کہ علاقہ عوام مشتبہ عناصر پر کڑی نظر رکھیں اور امن میں خلل ڈالنے والوں کے مذموم مقاصد کو خاک میں ملانے کے لئے پاک فوج اور انتظامیہ کے ساتھ تعاون کو یقینی بنائیں تاکہ علاقہ دیر پا امن اور خوشحالی کی منزلوں پر بدستور گامزن رہے.
 
انہوں نے کہا کہ پاک آرمی علاقہ کی تعمیر و ترقی کے لئے خصوصی اقدامات اٹھا رہی ہے اور علاقہ میں پا ک آرمی کے زیر اہتمام متعددترقیاتی منصوبوں پر تیزی سے کام جاری ہے.
 
انہوں نے کہا کہ قبائلی مشران نے جن مسائل کا ذکر کیا ہے وہ ان کے حل کے لئے عملی اقدامات اٹھائیں گے اوربعض مسائل کو پاک آرمی کے اعلی حکام تک پہنچائیں گے.
 
جرگہ کے اختتام پر پاکستان کی بقاء سلامتی اور علاقہ کی خوشحالی کے لئے خصوصی دعاء کی گئی۔۔۔