مہمند کے عوام کا پولیس چھاپے کے خلاف احتجاج

Share on facebook
Share on google
Share on twitter
Share on linkedin

خیبرپختونخوا میں ضم ہونے والے قبائلی ضلع مہمند کی تحصیل پڑانگ غار کے عوام نے پولیس چھاپوں کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا۔

آج ہونے والے احتجاج میں شامل افراد نے ہاتھوں میں پلے کارڈز اٹھا رکھے تھے جن پر پولیس چھاپوں کے خلاف مختلف نعرے درج تھے جبکہ مظاہرے کی قیادت ملک ساز محمد، ملک گلی خان، عبد اللہ خان، مشید گل، افضل شاہ خاموش اور سالار فیاض علی کررہے تھے۔

شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے ملک ساز محمد اور دیگر کا کہنا تھا کہ چند روز قبل پڑانگ غار میں ضلع چارسدہ پولیس نے بغیر لیڈی پولیس کے چھاپہ مارا تھا، پڑانگ غار کے لوگ  نہ تو دہشت گرد ہیں اور نہ ہی اخلاقی جرائم میں ملوث ہیں۔

انہوں نے کہا کہ قبائلی روایات اور رسم و رواج کو نہ چھیڑا جائے اور اگر ان روایات کو چھیڑا گیا تو یہاں بدامنی جنم لے گی۔ ان کا کہنا تھا کہ  ضلع مہمند کی مقامی انتظامیہ کے علاوہ دیگر علاقوں کی پولیس کے چھاپوں کے خلاف بھرپور مزاحمت کریں گے۔

قبائلی عمائدین نے کہا کہ ضلع مہمند میں غیرمقامی پولیس کے بلاجواز چھاپوں پر سیاسی قائدین اور ممبران اسمبلی کی خاموشی باعث مذمت ہے جس کے خلاف قومی اور صوبائی اسمبلیوں کے احتجاج بھی کریں گے۔

انہوں نے کہا کہ اگر یہ سلسلہ نہ روکا گیا تو آئندہ کا لائحہ عمل جل طے کیا جائے گا۔