وزیراعلیٰ محمود خان کا مومند کے لیے کئی ترقیاتی منصوبوں کا اعلان

Share on facebook
Share on google
Share on twitter
Share on linkedin

وزیراعلی خیبرپختونخوا محمود خان کا ضلع مومندکے دورے پر 132 کے وی گریڈ اسٹیشن کا افتتاح سمیت کئی ترقیاتی منصوبوں کا اعلان کیا.

وزیراعلیٰ محمود خان کے مطابق گریڈ اسٹیشن سے ضلع مہمند انڈسٹریل اسٹیٹ کو بجلی فراہم ہوگی جبکہ گریڈ اسٹیشن میں 52 کے وی کے دو ٹرانسفرمر لگائے ہیں۔ منصوبے سے ضلع مومند کی ماربل صنعت کو فروغ ملے گا اور منصوبہ 467.273 میلین کی لاگت سے مکمل ہوا۔

انہوں نے کہا کہ منصوبے پر 2007 سے کام شروع ہوا تھا جو کہ اب مکمل کرلیا گیا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ مومند ماربل انڈسٹریل زون میں گریڈ اسٹیشن سے اب افغانستان کو بھی ماربل کی برآمدات ہوسکیں گی۔

کیپٹن روح اللہ شہید سپورٹس سٹیڈیم میں منعقدہ اجتماع سے خطاب کے دوران وزیراعلیٰ کا کہنا تھا کہ قبائلی اضلاع میں اچھے طریقے سے انتخابی مہم نہ چلانے کی وجہ سے صوبائی انتخابات میں شکست ہوئی، قبائلی عوام مجھے بہت عزیزہے ان سے والہانہ محبت کرتاہوں اور اسلئے قبائلی اضلاع کے باربار دورے کرتا ہوں.

ضلع مومند کی پسماندگی کے خاتمے کیلئے خواتین کی ایک مخصوص نشست تخفہ کے طور پر ان کو دیا، افغان سرحد سے منسلک تمام قبائلی علاقوں میں صنعتی بستیاں قائم کی جائیں گی، گرسل بارڈر کو جلد کھول دیا جائے گا اعلیٰ سطح اجلاسوں میں اس مسئلے پر بحث کی ہے۔

اس موقع پر انہوں نے ہیڈکوارٹرغلنئی ہسپتال کو اپ گریڈ کرنے، مومند پریس کلب کیلئے دس لاکھ روپے کی گرانٹ اور میڈیا کالونی کے قیام کا اعلان بھی کیا۔ انہوں نے کہا کہ قبائلی عوام کی ترقی کیلئے سو ارب روپے کی خطیر رقم کو بجٹ میں شامل کیا گیا ہے.

ضلع مومند میں پینے کے پانی کی شدید بحران ہے دریائے کابل سے پانی کے منصوبے کیلئے ایک ارب روپے کا پراجیکٹ شروع کیا جائے گاجس سے علاقے میں پینے کے پانی کا مسئلہ حل ہوجائے گا۔

انہوں نے کہا کہ قبائلی عوام نے مشکل حالات میں ملک کا دفاع کیا ہے اور دہشت گردی کے خلاف جنگ میں وطن عزیز کیلئے بیش بہا قربانیاں دی ہے میں قبائلی عوام سے بہت زیادہ محبت کرتاہوں۔

ان کا کہنا تھا کہ ہم کشمیری عوام کے ساتھ ہے ان کے اخلاقی اور سفارتی مدد جاری رکھیں گے اگر ان کو ہماری جانی امداد کی ضرورت پڑی تو اس میں پشتون قوم کسی بھی قسم کی قربانی سے دریغ نہیں کریں گے۔

دریں اثنا ء انہوں نے ضلع مہمند کی ترقی کیلئے متعدد ترقیاتی منصوبوں کا اعلان کیا جس میں دریائے کابل سے پینے کے پانی کا منصوبہ شروع کرنے، سمال ڈیمز تعمیر کرنا، مہمند ڈیم میں مقامی افراد کو روزگار دینا، ہائی سکولوں اور مساجد میں سولرسسٹم نصب کرنا، نوجوانوں کے کھیل کود کی سرگرمیوں کیلئے ہرتحصیل میں سپورٹس سٹیڈیم تعمیر کرنا، خویزئی بائیزئی اور امبار میں ہائی سکولز کے قیام، تباہ شدہ مکانات کے مالکان کیلئے معاوضوں کی فراہمی اور تحصیل صافی میں نادرا سنٹر کی بحالی شامل ہیں۔

دورے کے موقع پر وزیراعلیٰ محمود خان کے ساتھ صوبائی وزیراطلاعات شوکت علی یوسفزئی اور ایم این اے مہمند ساجد خان بھی موجود تھے۔